دنیا کے سب سے بڑے چلغوزے کے جنگل میں 20 لاکھ درخت خاکستر

ریسکیو ٹیموں کو بلند و بالا پہاڑوں تک رسائی اور تیز ہوا کے باعث آگ بجھانے میں مشکلات کا سامنا

بلوچستان کے ضلع شیرانی میں واقع چلغوزے کے جنگل میں لگنے والی آگ سے مختلف اقسام کے 20 لاکھ درخت جل کر خاکستر ہوگئے ہیں۔

بلوچستان کے ضلع شیرانی میں واقع جنگل میں لگنے والی آگ کو کئی بروز بعد بھی بجھایا نہیں جاسکا۔ جنگل کی آگ پر قابو پانے کے لئے کی جانے والی کارروائیوں کے دوران اب تک 3 افراد جاں بحق جب کہ متعدد زخمی ہوچکے ہیں۔

26 ہزار ایکڑ پر مشتمل سلیمان رینج میں چلغوزے کا یہ جنگل دنیا کا ایک اہم اور بڑا جنگل ہے۔ یہاں ہر سال 650 سے لے کر 675 میٹرک ٹن کا چلغوزہ پیدا ہوتا ہے اور مجموعی طور پر چلغوزے کی 2.6 ارب روپے کی تجارت ہوتی ہے۔

ڈسٹرکٹ فاریسٹ ٰآفیسر عتیق کاکڑ کے مطابق آگ کے باعث اب تک 20 لاکھ درخت جل چکے ہیں۔ اب یہ خطرناک آگ تیزا ہواؤں کے باعث تحت سلیمان کی طرف بڑھ رہی ہے، ریسکیو ٹیموں کو بلند و بالا پہاڑوں تک رسائی اور تیز ہوا کے باعث آگ بجھانے میں مشکلات کا سامنا ہے۔

عتیق کاکڑ کا کہنا ہے کہ آگ پر قابو پانے کے لیے پاک فوج ، ایف سی ، محکمہ جنگلات ، پی ڈی ایم اے اور رضا کاروں کی ٹٰیمیں مصروف ہیں۔پاک فوج کے دو ہیلی کاپٹرز بھی آگ بجھانے کے عمل میں مصروف ہیں۔

دوسری جانب ایران کی جانب سے شیرانی میں واقع چلغوزے اور زیتون کے جنگلوں میں لگی آگ بجانے کے لئے دنیا کی سب سے بڑی ائیر فائر فائیٹر ایلوشین-76 فراہم کر دیا گیا ہے جو آگ پر مکمل قابو پانے تک پاکستان میں موجود رہےگا۔

کوئٹہ میں ایرانی قونصل خانے کے مطابق پاکستان کی درخواست پر بلوچستان کے ضلع شیرانی کے جنگلوں میں لگی آگ کو بجھانے کے لیے اپنی سب سے بڑی ایئر فائیر فائٹر طیارہ فراہم کر دیا گیا ہے۔

ایلوشین-76 نامی یہ فائر فائٹر طیارہ ناصرف ایران بلکہ پوری دنیا میں سب سے بڑا فائر فائٹر طیارہ ہے جو کہ بیک وقت 40 ٹن پانی فضا سے اپنے ہدف پر چھوڑ سکتا ہے۔ جہاز کی کوئٹہ ایئرپورٹ پر اترنے کی گنجائش موجود نہیں۔یہ طیارہ نور خان ایئر بیس سے اڑان بھرے گا اور شیرانی میں چلغوزے اور زیتون کے جنگلوں میں لگی آگ پر مکمل طور پر قابو پانے تک پاکستان میں رہےگا۔

اس سے قبل اس ایرانی جہاز کو اس کی بہترین کارکردگی کی بنا پر جارجیا، آرمینیا اور ترکی کے جنگلوں میں لگی آگ پر قابو پانے کیلئے استعمال کیا گیا ہے۔ ترکی کے جنگلوں کی آگ بھجانے کے عمل کے دوران بین الاقوامی اداروں نے اسے دنیا کی بہترین فائٹر طیارے قرار دیا تھا۔

fire in balochistan

pine forest fire

Tabool ads will show in this div