دنیا کی عجیب ترین گلیاں

By: Samaa Web Desk
March 20, 2017

امریکا/یورپ/ایشیا : دنیا میں یوں تو شاہکار اور عجیب ترین حوالوں سے کئی چیزیں مشہور ہیں، تاہم دنیا میں چند گلیاں اور مقامات ایسے بھی ہیں جو عجیب و غریب کی کیٹگری میں شمار ہوتے ہیں، ان گلیوں کی اہمیت اس کے ارد گرد بسنے والوں کیلئے کئی حوالوں سے یادگار ہیں، ذیل میں آئیں آپ کو لے کر چلتے ہیں ان ہی کچھ گلیوں کی سیر پر جو اپنے منفرد انداز کے باعث دیکھنے والوں کو حیران کر دیتی ہیں۔

سانپ گلی، تائیوان

جی ہاں، اگر آپ کا تائیوان جانا ہو تو آپ سانپ گلی کا رخ ضروری کریں، جہاں زندہ سانپ اور ان سے بنی مصنوعات فروخت کی جاتی ہیں، یہاں مچھلیوں کا خون، سانپ کا قیمہ، دیگر سمندری حیات کے اعضاء وغیرہ کی مارکیٹس بھی بنی ہوئی ہیں، تاہم سانپ سے محبت پر اس جگہ کو سانپ گلی کا نام دیا گیا ہے۔ تاہم یہاں جانے سے پہلے یاد رکھیں کہ اگر آپ کا دل کمزور ہے تو اس جگہ جانے سے اجتناب برتیں، کیوں کہ یہاں زندہ سانپوں اور دیگر حشرات العرض کو کیسے سب کے سامنے کاٹا جاتا ہے، یہ ہلکی دل والے افراد دیکھنے کی تاب نہیں رکھتے۔

سانپ گلی، تائیوان

ریو کوسنا، کینیڈا

کینیڈین شہر کیوبک کی ریو کوسنا نامی گلی کی وجہ شہرت یہی ہے جو کینیڈا اور امریکا کے درمیان بین الاقوامی سرحد بھی مانی جاتی ہے۔ یہاں تو ایک گھر کا باورچی خانہ کینیڈا اور سونے کا کمرہ امریکا میں ہے۔ ایسے ہی یہاں واقع سینما گھر کا حال ہے جس کا اسٹیج کینیڈا اور داخلی دروازہ امریکی علاقے میں ہے۔

ریو کوسنا، کینیڈا

اینجل پلیس، سڈنی

اس گلی میں آپ کو جا بجا پنجرے لٹکے ہوئے نظر آئیں گے، یہ پنجرے یہاں ایک گلوکار نے جنگلی حیات کی صورتحال پر توجہ کے لیے لٹکائے تھے جو اتنے مقبول ہوئے کہ انہیں مستقل جگہ مل گئی اور یہاں کان لگا کر سنیں تو پورا دن اس گلوکار کا گیت بجتا رہتا ہے جو پچاس یا اس سے زائد پرندوں کی اقسام کی چہچہاہٹ میں سنائی دیتا ہے جبکہ رات کو وہ آسٹریلین او اور ایسے ہی رات کو جاگنے والے پرندوں کی آواز میں بدل جاتا ہے۔

اینجل پلیس، سڈنی

میکلونگ مارکیٹ ریلوے، تھائی لینڈ

ریلوے لائن بھی اور گلی بھی ہے ناں حیرت کی بات؟ ٹھیلوں پر دکاندار لوگوں کو سبزیاں و پھل تھیلوں میں دے رہے ہوتے ہیں اور دوسرے لمحے وہاں ٹرین کی سیٹی بجتی ہے اور ٹھیلے ہٹنا شروع ہوجاتے ہیں۔ پھر ٹرین پوری رفتار سے اس ٹریک سے گزرتی ہے جہاں ٹھیلوں و گاڑیوں کی بدولت کچھ دیر پہلے پاﺅں رکھنے کی جگہ بھی نظر آرہی ہوتی ہے مگر جیسے ہی ٹرین گزرتی ہے چہل پہل پھر سے ایسے شروع ہوجاتی ہے جیسے وہاں سے کبھی ٹرین گزری ہی نہ ہو۔

میکلونگ مارکیٹ ریلوے، تھائی لینڈ

ڈی جولیو ایونیو، ارجنٹائن

یہ دنیا کی سب سے چوڑی گلی ہے جسے دیکھ کر پہلی نظر میں تو کسی موٹروے کا خیال ذہن میں آتا ہے کیونکہ یہاں گاڑیوں کے گزرنے کے لیے بارہ لین کی سڑک موجود ہے۔ اس کی تعمیر تیس کی دہائی میں شروع ہوئی اور اسے مکمل ہونے میں پچاس سال کا عرصہ لگا اور اس کی بدولت ہی ارجنٹائن کے شہر بیونس آئرس کو لاطینی امریکا کے پیرس کا درہ مل گیا۔ اسی گلی کے آس پاس اس شہر کی بیشتر تاریخی یادگاریں بھی دیکھ جاسکتی ہیں۔

ڈی جولیو ایونیو، ارجنٹائن

نورڈراسٹریب، جرمنی

جوتوں کے نیچے سے گزرتے ہوئے ہوسکتا ہے آپ کو خوف محسوس ہو مگر شمالی جرمن قصبے فلینسبرگ کی اس گلی میں داخل ہوتے ہی آپ کو اس تجربے کا سامنا ہوتا ہے۔ یہاں سیکڑوں جوتے سر کے اوپر رسیوں پر لٹکے ہوتے ہیں اور اس حوالے سے کئی روایات مشہور ہیں جیسے کوئی لڑکا بالغ ہوجاتا ہے تو اس کے اظہار کے طور پر جوتا لٹکا دیتا ہے۔

نورڈرسٹریب، جرمنی

بالڈوین اسٹریٹ، نیوزی لینڈ

یہ دنیا کی سب سے نشیبی گلی قرار دی جاتی ہے، جو نیوزی لینڈ کے شہر ڈونیڈن میں واقع ہے۔ لمبائی میں کسی فٹبال گراﺅنڈ جتنی بڑی گلی ڈھلان کی شکل میں اوپر سے نیچے آرہی ہے اور اس پر چلنا لوگوں کو تھکا کر رکھ دیتا ہے اور اسی لیے یہاں 270 سیڑھیاں موجود ہیں، جن پر اوپر چڑھنے کے بعد سیاحوں کی تھکن اوٹاگو بندرگاہ کے خوبصورت نظارے کو دیکھ کر اتر جاتی ہے۔

بالڈوین اسٹریٹ، نیوزی لینڈ

اسپریئرہو فسٹریب، جرمنی

اس گلی میں گزرنا دبلے پتلے افراد کا ہی کام ہے، موٹے افراد تو اس میں پھنس کر رہ جاتے ہیں کیونکہ اسے دنیا کی سب سے پتلی گلی کہا جاتا ہے جو محض 12.2 انچ چوڑی ہے۔ اس گلی کو 1727 میں روٹ لنگن نامی شہر میں بڑے پیمانے پر آتشزدگی کے بعد تعمیر کیا گیا تھا اور اسے دیکھ کر سمجھ نہیں آتا کہ بلڈرز نے کیا سوچ کر اس گلی کو بنایا۔

اسپریئرہوفسٹریب، جرمنی

ہوزر لین، آسٹریلیا

دیواروں پر نقش و نگار بنانا اکثر کافی تنازعات کا باعث بن جاتا ہے مگر آسٹریلین شہر میلبورن کی ہوزر لین نامی گلی کی شہرت ہی وہاں دیواروں پر زبردست قسم کے فنکارانہ مصوری کے نمونے ہیں۔ یہاں مقامی اور بین الاقوامی افراد کو اپنی صلاحیت کے جوہر دکھانے کی مکمل آزادی حاصل ہے اور وہ کارٹونز سے لے کر پوسٹرز اور لوگوں کی تصاویر سب کچھ تیار کرسکتے ہیں۔

ہوزر لین، آسٹریلیا

ایسٹراڈا دو بوم جیزز، پرتگال

پرتگالی علاقے براگا کی یہ گلی جادوئی بھی کہی جاسکتی ہے جہاں آپ اپنی گاڑی نیوٹرل گیئر میں رکھیں تو وہ کشش ثقل کے تمام تر اصولوں کے خلاف اوپر پہاڑی کی جانب چڑھنے لگتی ہے۔ متعدد افراد کا ماننا ہے کہ یہاں مقناطیسی کشش گاڑیوں کو اوپر کی جانب کھینچتی ہے جبکہ کچھ کے خیال میں یہاں کوئی ماورائی طاقت ہے مگر حقیقت یہ ہے کہ یہ قدرت کا بصری دھوکہ ہے کیونکہ یہاں دو سڑکیں اکھٹی ہوتی ہیں جو دیکھنے میں ایسی لگتی ہے جیسے یہ ایک جانب سے اونچی ہے حالانکہ وہ نشیب کی جانب جارہی ہوتی ہے۔

ایسٹراڈا دو بوم جیزز، پرتگال

اسنیک ایلی، امریکا

دنیا میں سب سے زیادہ موڑ والی کسی جگہ کو دیکھنا ہو تو آئیووا کے علاقے برلنگٹن کی اسنیک ایلی نامی گلی میں پہنچ جائیں جس میں سفر لوگوں کا ذہن گھما کر رکھ دیتا ہے۔ یہاں کے موڑ کسی سانپ کی طرح مڑے ہوئے ہیں جن کی تعداد پانچ ہے اور وہاں سے گاڑی 1100 ڈگری میں موڑنا پڑتی ہے۔

اسنیک ایلی، امریکا

ہیڈلبرگ اسٹریٹ، امریکا

ڈیٹوریٹ میں واقع اس گلی کی خاصیت ہی یہ ہے یہاں متعدد خالی گھر، باڑیں اور دیگر موجود ہیں جہاں سیاح اپنی پسند کی کوئی بھی چیز لٹکا سکتے ہیں اور اس جگہ پر ہر سال تین لاکھ کے قریب افراد آتے ہیں جو کچھ نہ کچھ لٹکا کر جاتے ہیں جس سے یہ کسی گلی کی بجائے میوزیم کا منظر پیش کرتی ہے۔ سماء

ہیڈلبرگ اسٹریٹ، امریکا

Email This Post
 
 

آپ کے تبصرے

Your email address will not be published.