ہوم   > ویڈیو

دجال کی آمد قرب قیامت کی نشانی ہے

SAMAA | - Posted: Dec 6, 2019 | Last Updated: 2 months ago
SAMAA |
Posted: Dec 6, 2019 | Last Updated: 2 months ago

مذہبی اسکالر اور سماء ٹی وی کے اینکر پرسن بلال قطب کا کہنا ہے کہ قران کریم میں براہ راست دجال کا ذکر نہیں ملتا مگر احادیث میں اس بارے میں وضاحت موجود ہے اور احادیث کے مطابق دجال کا زمانہ قیامت کے قریب ترین ہوگا۔ دجال کا ظہور قیامت کی نشانیوں میں سے ہے۔

ایک صحابی تمیم داری کی رسول اللہ سے ملاقات ہوئی۔ انہوں نے بتایا کے جب میں سمندر میں جارہا تھا اور ایک جزیرے پر میری کشتی رکی تو میں وہاں ایک ایسے شخص سے ملا جس کے جسم پر لمبے لبے بال تھے۔ اور وہ لوہے کی کڑیوں میں قید تھا۔ اس نے مجھ سے پوچھا کہ محمد کے نام سے ایک ہستی نے دنیا میں آنا تھا کیا وہ آگئی ہے۔

صحابی کے مطابق میں نے اس شخص کو بتایا کہ جی وہ شخصیت آچکی ہیں۔ تو اس نے کہا اب وقت آخر شروع ہوگیا ہے اور اس شخص نے صحابی کو یہ بھی بتایا کہ میں دجال ہوں۔

بلال قطب نے کہا کہ دجال زمانہ حضرت امام مہدی کے زمانے کے قریب کا ہے۔ حدیث شریف میں ہے کہ جب سفید مینار کی مسجد میں نماز پڑھ رہے ہوں گے۔ فجر کی نماز ہوگی اور اس وقت دجال دروازے پر آئے گا۔ یہ وہ واقعہ ہے جس میں حضرت عیسیٰ آئیں گے اور امام مہدی کہیں گے کہ آئیں آپ نماز پڑھائیں۔

احادیث کے مطابق اس وقت حضرت عیسیٰ کہیں گے آپ ہی امام ہیں، آپ ہی نماز پڑھائیں۔ حدیث کہتی ہے کہ یہ وہی وقت ہے جب وہ اپنے سپاہیوں کے ساتھ آئے گا اور حضرت عیسی اس کو ماریں گے اور اتنا ماریں گے اور اسے مارتے ہوئے دو پہاڑیوں کے دامن میں لے جائیں گے اور آگے جاکر اسے سمندر میں غرق کردیں گے۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے

Your email address will not be published.

 
متعلقہ خبریں
 
WhatsApp FaceBook
 
 
 
 
 
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube