Wednesday, December 1, 2021  | 25 Rabiulakhir, 1443

الیکشن 2018 ، خیبر پختونخوا کے غیر حتمی غیر سرکاری نتائج

SAMAA | - Posted: Jul 26, 2018 | Last Updated: 3 years ago
SAMAA |
Posted: Jul 26, 2018 | Last Updated: 3 years ago

خبیرپخونخوا کی صوبائی اسمبلی کے حلقوں سے موصول غیر حتمی اور غیر سرکاری نتائج کی نمبر وار تفصیل یہ ہے، الیکشن کمیشن پاکستان حتمی نتائج کا اعلان بعد میں کرے گی۔

پی کے 11 اپر دیر 2 :  تمام پولنگ اسٹیشنز کے غیر سرکاری نتائج کے مطابق پیپلزپارٹی کے صاحبزادہ ثناء اللہ 18 ہزار 900 ووٹ لے کر کامیاب قرار پائے ہیں، ان کے مد مقابل ایم ایم کے اعظم خان کو 12 ہزار 15 ووٹ ملے۔

پی کے 22 بونیر: غیر سرکاری نتائج کے مطابق عوامی نیشنل پارٹی کے سردار بابک رکن صوبائی اسمبلی منتخب ہوگئے، انہوں نے 21 ہزار 918 ووٹ حاصل کئے ہیں۔

پی کے 23 شانگلہ:  پی ٹی آئی کے شوکت یوسف زئی نے 16 ہزار 571 ووٹ کے ساتھ ایک بار پھر صوبائی اسمبلی کی سیٹ پکی کرلی، غیر سرکاری نتائج کے مطابق مسلم لیگ ن کے محمد ارشاد نے 12 ہزار 219 ووٹ لئے ہیں۔

پی کے 66 پشاور: 33 فیصد پولنگ اسٹیشنز کے غیرسرکاری نتائج کے مطابق تحریک انصاف کے محمود جان 6130 ووٹ لے کر آگے، جبکہ متحدہ مجلس عمل کے حشمت خان 3376 ووٹ لے کر پیچھے۔

پی کے67 پشاور: 28 فیصد پولنگ اسٹیشنز کے غیرسرکاری نتائج کے مطابق تحریک انصاف کے ارباب محمد وسیم خان 4660 ووٹ لے کر آگے، جبکہ پیپلز پارٹی کے رضا اللہ خان 2392 ووٹ لے کر پیچھے۔

پی کے 70 پشاور 4:  پاکستان تحریک انصاف کے سابق وزیر شاہ فرمان کو مخالفین پر سبقت حاصل ہے۔

پی کے 77 پشاور : 33 فیصد پولنگ اسٹیشنز کے غیرسرکاری نتائج کے مطابق تحریک انصاف کے کامران خان بنگش 9729 ووٹ لے کر آگے جبکہ ان کے مقابلے میں متحدہ مجلس عمل کے خیرالبشر 3286 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر ہیں ۔

پی کے 83 ہنگو: پی ٹی آئی کے شاہ فیصل 10 ہزار 500 ووٹ لے کر سرفہرست ہیں، ان کا مقابلہ ایم ایم اے کے عبید اللہ اے این پی کے حسین علی شاہ سے ہیں۔

پی کے 84 ہنگو: غیر سرکاری نتائج میں پی ٹی آئی کے ظہور شاکر کو کامیاب قرار دے دیا گیا۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube