Thursday, January 20, 2022  | 16 Jamadilakhir, 1443

چاند پر ’پراسرار جھونپڑی‘ دریافت

SAMAA | - Posted: Dec 7, 2021 | Last Updated: 1 month ago
Posted: Dec 7, 2021 | Last Updated: 1 month ago

چین کی خلائی گاڑی یو ٹو2 نے چاند کے تاریک حصے میں چوکور شکل کی ایک چیز دریافت کی ہے جسے ’پراسرارجھونپٹری‘ کا نام دیا گیا ہے۔  

یہ عجیب و غریب سفید چیز تصویروں میں بالکل سیاہ افق کے مقابل عجیب انداز میں جیومیٹرک دکھائی دیتی ہے اور اس نے چین کے چینج 4 مشن کے سائنسدانوں کو اس کے یوٹو 2 روور کو چیک آؤٹ کرنے کے لیے 2 سے 3 ماہ کے سفر پر بھیجنے پر آمادہ کرلیا ہے۔

چین کی نیشنل اسپیس ایڈمنسٹریشن (سی این ایس اے) نے اس چیز کو ’پراسرار جھونپڑی‘  کے طور پر بیان  کیا ہے۔

سی این ایس اے نے ازراہِ مذاق یہ بھی کہا کہ یہ آبجیکٹ ایک گھر ہو سکتا ہے جسے ایلینز (خلائی مخلوق) نے جنوبی قطب-آٹکن بیسن میں کریش لینڈنگ کے بعد بنایا ہو جہاں روور جنوری 2019 سے گھوم رہا ہے۔

ایسا لگتا ہے کہ اس پر اسرار جھونپڑی کے بالکل ساتھ ایک چھوٹا سا گڑھا موجود ہے۔

اس دریافت کے بعد، سائنسدان مزید تحقیقات کے لیے روور کو  آگے بھیج دیا ہے جو  خلائی گاڑی کی پوزیشن سے 262 فٹ کے فاصلے پر موجود ہے۔

جولائی 2019 میں یوٹو-2 نے اس وقت ایک اور انوکھی دریافت کی تھی جب اسے ایک عجیب، رنگین ’جیل نما‘،  مادہ ’ایک پراسرار چمک کے ساتھ‘ ملا تھا تاہم اس مادے کی وضاحت تاحال نہیں کی جاسکی۔

خیال رہے کہ چین نے3 برس قبل چاند کے دور دراز اور تاریک حصوں سے متعلق تحقیقات کے لیے ایک خلائی گاڑی روانہ کی تھی جو مختلف مادے ملنے پر تصاویر ارسال کرتی ہے۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube