ہواوے فونز میں آئندہ گوگل ایپلی کیشنز نہیں چلیں گی

May 20, 2019

ہواوے کے آئندہ آنیوالے اسمارٹ فونز میں گوگل کی ایپلی کیشنز نہیں چلیں گی۔

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی چین کے خلاف معاشی جنگ کا ایک اور اثر سامنے آگیا، گوگل نے ہواوے کا اسمارٹ فونز بنانے والی دنیا کی سب سے بڑی کمپنی بننے کا خواب چکنا چور کردیا۔

چینی کمپنی کے آئندہ مارکیٹ میں آنیوالے موبائل فونز میں گوگل کی ایپلی کیشنز نہیں چلیں گی، یعنی لاکھوں یوزرز کے پاس جی میل، یو ٹیوب اور گوگل میپ کی سہولت نہیں ہوگی۔

معاشی ماہرین گوگل کے اقدام کو ہواوے کے خوابوں کا خون قرار دے رہے ہیں، گوگل نے امریکی حکومت کے کہنے پر ہواوے پر پابندیاں لگائیں۔

گوگل کی پابندیوں پر ہواوے کے ترجمان نے کہا کہ وہ اینڈرائیڈ کی طرح اپنا آپریٹنگ سسٹم لانے پر غور کر رہے ہیں۔

ہواوے کورین برانڈ سام سنگ کے بعد موبائل فون بنانے والی دنیا کی دوسری بڑی کمپنی ہے، جس کی فائیو جی ٹیکنالوجی سے امریکی حکومت خوفزدہ ہے۔