بھارت 19 خلائی مشنز کا تجربہ کرے گا

September 5, 2018

بھارتی خلائی تحقیقاتی ادارے اسرو نے کہا ہے کہ وہ آئندہ سات ماہ کے دوران 19 خلائی مشنز کا آغاز کرے گا۔


بھارتی خبر رساں ادارے کے مطابق نئی دہلی میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے خلائی تحقیقاتی ادارے اسرو کے چیئرمین کے شیون نے بتایا کہ ادارہ آئندہ 7 ماہ کے دوران 19 خلائی مشنز کا آغاز کرے گا، جب کہ اس پروگرام میں 10 سیٹلائٹ اور 9 لانچنگ وہیکل شامل ہیں۔ تمام تجربات ستمبر سے مارچ کے درمیان کئے جائیں گے اور ہر ماہ 2 تجربات کئے جائیں گے۔

انہوں نے بتایا کہ 15 ستمبر سے پی ایس ایل وی سی 42 اپنے ساتھ برطانیہ کے 2 سیٹلائٹ نوواسر آر ایس 1۔4 کو اپنے ہمراہ لے جائے گا۔ خلائی تحقیقاتی ادارہ اسرو اکتوبر میں ایم کے 3، ڈی 2 لانچ کرے گا، یہ 4 ٹن وزنی سب سے طاقتور راکٹ ہوگا۔ اکتوبر ہی میں پی ایس ایل وی سی 43 بھی لانچ کرے گا اور جی سیٹ 7 اے کی لانچنگ بھی کی جائے گی، جو فضائیہ کے لئے کافی مدد گار ثابت ہوگی۔

چیئرمین نے بتایا کہ دسمبر میں بھی پی ایس ایل وی سی 44 اور جی سیٹ 31 راکٹ لانچ کئے جائیں گے، جب کہ آئندہ سال 3 جنوری سے 16 فروری کے درمیان خلائی مشن پر چندر یان 2 روانہ کیا جائے گا۔ جنوری میں ہی پی ایس ایل وی سی 45 راکٹ اپنے ساتھ ریموٹ سینسنگ سیٹلائٹ ری سیٹ 2 بی لے جائیگا۔

 

چیئرمین کا مزید کہنا تھا کہ فروری میں پی ایس ایل وی سی 46 راکٹ 2 سیٹلائٹ کارٹو سیٹ 3 اور نیمو اے ایم روانہ کیا جائیگا۔ اے پی پی