You are here:    Home      Posts tagged "SAMAA Blog"

زرد چنار اور برہان وانی

پاکستان سامنے آکر کشمیر کا مقدمہ لڑے

مزید پڑھیے
 

کراچی کا دیوار گریہ

ہمیشہ کی طرح آج بھی یہاں بھیڑ لگی ہے، لوگ اپنے حقوق کا رونا رو رہے ہیں، ہماری مانگیں پوری کرو ورنہ؟ ہمیں ہمارے حقوق نہ ملے تو آخری حد تک جائیں گے، وغیرہ وغیرہ۔ یہ کراچی پریس کلب کے باہر کے مناظر ہیں، جہاں روزانہ سیکڑوں لوگ آتے ہیں، رونا دھونا کرتے ہیں۔ صحافی…

مزید پڑھیے
 

تبدیلی کے منتظر لوگوں سے چند سوالات

گزشہ سال انہی دنوں ہر طرف سرخ و سبز جھنڈوں کی بہار نظر آتی تھی، پرانے پاکستان کے پرانے نظام سے اُکتائے ہوئے لوگ تبدیلی چاہتے تھے، سابق حکمرانوں، سیاستدانوں کے وعدوں اور دعوؤں کے پورا نہ ہونے سے مایوس لوگ پھر سے پُر امید ہوگئے تھے، جس سڑک سے گزر ہوتا وہیں پارٹی ترانوں…

مزید پڑھیے
 

ساحلوں کی حفاظت،ابھی نہیں تو کبھی نہیں

اب سے تین سال قبل کی بات ہے کہ فیملی پکنک کیلئے مبارک ولیج جانے کا سوچا گیا،ا س وقت مبارک ولیج کے بارے میں بہت کم لوگ جانتے تھے کیوں کہ یہ کراچی کے وسط سے تقریباً دو سے ڈھائی گھنٹے کی مسافت پر واقع ہے۔ جس وقت پہلی مرتبہ جانا ہوا تو اس وقت…

مزید پڑھیے
 

عمران خان کا سیاسی مستقبل

پاکستان تحریک انصاف کے نامزد وزیراعظم عمران خان دو تہائی اکثریت حاصل کرنے میں اب تک کامیاب نہیں ہوسکے۔ اگر عمران خان دو تہائی اکثریت کے بغیر حکومت بناتے ہیں تو انہیں شدید مشکلات کا سامنا کرنا پڑے گا۔ آئین میں ترمیم کے لئے عمران خان کو دو تہائی اکثریت اسمبلی میں درکار ہوگی جبکہ قانون سازی کے…

مزید پڑھیے
 

عام انتخابات میں سیاہی کا کمال

تحریر: شرجیل احمد قریشی سال 2017 ء میں چیف الیکشن کمشنر جسٹس (ر) سردار محمد رضا کی زیر صدارت عام انتخابات 2018ء کے حوالے سے اہم فیصلے کئے گئے، جس میں منیجنگ ڈائریکٹر پرنٹنگ کارپوریشن پریس پاکستان، پاکستان سیکیورٹی پرنٹنگ کارپوریشن کراچی، پاکستان کونسل برائے سائنسی و صنعتی تحقیق، وزارت خزانہ، کابینہ ڈویژن اور پوسٹل…

مزید پڑھیے
 

منگو کا نيا پاکستان

برصغيرميں انگريزکے آخري دن تھے منگو کوچوان اچھے دنوں کے انتظارميں تھا، اڈے کے سارے کوچوان اس ان پڑھ دانشورسے آنے والے دنوں کاحال جانتے تھے، منگومدبرانہ اندازميں حقے کا دم لگاتا تھا، اچھے دنوں کا دم بھرتا تھا، اورسادہ کوچوانوں کونمک مرچ لگي خبريں سناتا تھا، سب منگوپرآنکھيں بند کرکے بھروسہ کرتے تھے۔ بھروسہ…

مزید پڑھیے
 

کراچی میں پی ٹی آئی کیسے جیتی

25 جولائی کو پاکستان کے گیارہویں عام انتخابات کا انعقاد پرامن طریقے سے اپنے تکمیل کو پہنچا. پاکستان تحریک انصاف کی پورے پاکستان سے تاریخی کامیابی نے جہاں ایک جانب نئی تاریخ رقم کی وہاں بڑے بڑے سیاسی بتوں کو تبدیلی کے سونامی میں بہا لے جانے کا عمران خان کا وعدہ بھی پورا ہوا….

مزید پڑھیے
 

اب کی بار تبدیلی سرکار

حالات و واقعات اور ملکی سیاسی صورتحال کو دیکھ کر بخوبی اندازہ لگایا جا سکتا ہے کہ اس مرتبہ تحریک انصاف کی حکومت قائم ہوگی۔ کرکٹ کے میدان سے سیاست کے میدان میں قدم رکھنے والے عمران خان کے سیاسی کیریئر پر نظر ڈالی جائے تو انہوں نے 1996 میں اپنی جماعت کی بنیاد رکھی۔…

مزید پڑھیے
 

پانی دو ووٹ لو

پانی دو ووٹ لو بلوچستان کے عوام کا نعرہ اپنے نمائندوں سے سچ تو یہ ہے پرانے وقتوں میں بلوچستان میں بارش اور دریاؤں میں پانی کی خاطر لوگ عورتوں بچوں کی قربانی دیا کرتے تھے ۔لگتا ہے اب زمانہ بدلا نہیں۔ بلوچستان میں تھوڑے سے فرق کیساتھ خون بہانے کا یہ سلسلہ آج بھی…

مزید پڑھیے
 

سیاسی تشدد ، انسانوں سے گدھوں تک

چنددن قبل مسلم لیگ ن کے ووٹروں کو گدھے کا خطاب دیا گیاجس سے سوشل میڈیا پر گدھے کی نسبت سے مختلف تصاویر اور بیانات گردش کرنے لگے ۔ مسلم لیگ نون کے اہم راہنما اور سابق اسپیکر اس بیان کے بعد میدان میں اترے اور فرط جذبات میں اس سے بھی آگے نکل گئے۔…

مزید پڑھیے
 

بیوی کی عزت کیجئے

وہ میرے سامنے سر جھکائے بیٹھا تھا۔ وہ بات کرنے کیلئے منہ کھولتا لیکن ایک آدھ لفظ بول کر ہی خاموش ہو جاتا تھا۔ میں نے اُس کو پانی پینے کیلئے دیااور دل ہی دل میں دعا کی کہ اللہ خیر ہی کرے۔ بالاخر اُس نے اپنی ہمت جمع کی اور بولا کہ سالار بھائی…

مزید پڑھیے
 

لسانی سیاست اور ایم کیو ایم پاکستان

لیاقت آباد میں پاکستان پیپلز پارٹی کے کامیاب جلسے کے بعد ایم کیو ایم پاکستان نے ایک مرتبہ پھر ‘جاگ مہاجر جاگ’ کا نعرہ لگا دیا ہے۔ یہ کوئی نئی بات نہیں کراچی میں لسانی اور مذہبی سیاست کی ایک طویل داستان ہے۔ ایک زمانے میں جماعت اسلامی کراچی کی سب سے بڑی جماعت ہوا کرتی…

مزید پڑھیے
 

بے بس نسواں کمیشن

خیبر پختونخوا حکومت اس بات کا کریڈٹ لینے میں خوشی محسوس کرتی ہے کہ دیگر صوبوں کی نسبت یہاں وقار نسوان کمیشن (خیبر پختونخوا کمیشن آن دی سٹیٹس آف وومن ) سب سے زیادہ باختیار ہے اور صوبائی حکومت کے دعوے کو مزید تقویت اس وقت ملی جب گزشتہ برس دسمبر میں وزیر اعلیٰ ہاﺅس…

مزید پڑھیے
 

بھٹو اور پاکستان

بلاگر: کامران عبدالغنی چار اپریل پاکستانیوں کے لئے سیاہ ترین دن کی حیثیت رکھتا ہے۔ 4 اپریل کو ہی پاکستان کے پہلے منتخب وزیراعظم ذوالفقار علی بھٹو کو پھانسی کے تختہ دار پر لٹکایا گیا۔ اس بات میں کوئی دو رائے نہیں کہ ذوالفقار علی بھٹو اپنے وقت کے سب سے بڑے عوامی لیڈر تھے۔…

مزید پڑھیے
 

معاشرے میں بڑھتا عدم اعتماد

تحریر: ڈاکٹر چوہدری تنویر سرور نہ صرف ہمارے معاشرے میں بلکہ پوری دنیا میں بڑھتا عدم اعتماد ایک بیماری کی شکل اختیار کرتا جا رہا ہے جس کو دیکھو وہ دوسرے کو برداشت کرنے کو تیار نہیں ،سیاست میں بھی عدم برداشت دیکھا جا سکتا ہے آج کل جو سیاست پاکستان میں ہو رہی ہے…

مزید پڑھیے
 

چیف جسٹس صاحب: اندھیروں میں امید کی کرن

تحریر: مہدی قاضی چیف جسٹس میاں ثاقب نثار کے مختلف جگہوں کے دوروں سے بہت سےافرادتکلیف مبتلا ہیں اور ان میں عموماً وہ ہیں جنہوں نے جمہوریت کے حصول کیلئے جدوجہد کی۔ گزشتہ تحریر میں ایک سوال پیش کیا تھا کہ کیا جمہوریت کسی مقصد کو حاصل کرنے کا آلہ ہے یا بذاتِ خود ہی…

مزید پڑھیے
 

پاکستان سپر لیگ، امن کا پیغام

بلاگر: کامران عبدالغنی پاکستان سپر لیگ کے تیسرے ایڈیشن کا اختتام شایان شان طریقے اور پر امن انداز میں ہوگیا۔ قانون نافذ کرنے والے اداروں کی جانب سے سخت سیکیورٹی کا بندوبست کیا گیا جس کے باعث کوئی بھی ناخوشگوار واقعہ پیش نہیں آیا۔ پی ایس ایل کا پہلا ایڈیشن دبئی میں ہوا۔ دوسرے ایڈیشن…

مزید پڑھیے
 

کیوں ایک آنکھ چھوٹی، ایک بڑی ہے؟

شرمین کی بیٹی کی عمر چار سال ہوگئی تھی، اسے کسی اسکول میں داخلہ کروانا تھا، جب اس نے اس سلسلے میں اپنے شوہر نامدار سے بات کی تو ان کا کہناتھا کہ ’’بھئی اس میں سوچنے کی کیا ضرورت ہے، جس اسکول سے تم نے پڑھا تھا، اسی اسکول میں اسے داخلہ دلوادو۔ ا…

مزید پڑھیے
 

گمنام لاشیں

****تحریر : ثنا انعام *** وہ خطروں سے لڑتا ،،افلاس سے مرتا ۔۔ ایجنٹوں  کے ہاتھوں جمع  پونجی لٹا کر  امریکہ پہنچا۔۔۔۔۔وہاں پہنچتے ہی  ۔۔اس سے  سب سے پہلے پہچان چھین لی گئی ۔ اس نے اپنا  نام تبدیل کر لیا ۔۔۔ پھر کبھی یہاں کبھی وہاں چھپتے چھپاتے ۔۔ نوکریاں بدلتے ۔۔۔ تنہائیاں ہی …

مزید پڑھیے
 

منشی کو پکڑو

تحریر: شہروز کلیم پاکستان میں منشی کو ہمیشہ ایک ایسے سماجی کردار کے طور پر پیش کیا جاتا آ رہا ہے، جو کہ اپنے زیر سایہ  ظلم اور زیادتی کو فروغ دیتا آیا، جب کہ درحقیقت  یہ تاثر مجموعی طور پر غلط ہے۔ افسوس کہ، آج تک کسی نے بھی اس طبقے کے مسائل کی…

مزید پڑھیے
 
 
Facebook Twitter Youtube