Monday, April 12, 2021  | 28 Shaaban, 1442

معین علی کیلئےنامناسب الفاظ تسلیمہ نسرین کو مہنگے پڑے

SAMAA | - Posted: Apr 7, 2021 | Last Updated: 5 days ago
Posted: Apr 7, 2021 | Last Updated: 5 days ago

تصویر: سماء ڈیجیٹل

بنگلہ دیشی مصنفہ تسلیمہ نسرین ، انگلش کرکٹر معین علی سے متعلق متنازع ٹویٹ کرنے پر شدید تنقید کی   زد میں ہیں، شدید ردعمل کا سامنا کرنے کے بعد مصنفہ کو اپنی ٹویٹ ڈیلیٹ کرنی پڑی۔

تسلیمہ نے انگلینڈ کرکٹ ٹیم کے آل راؤنڈر معین علی کے حوالے سے سماجی رابطوں کی سائٹ ٹوئٹر پر لکھا ” اگرمعین علی کرکٹ میں نہ پھنسے ہوتے تو شام جا کر آئی ایس آئی ایس میں شمولیت اختیار کرلیتے”۔

اس نامناسب ٹویٹ پر معین علی کے ساتھی کرکٹرز جوفرا آرچر، سیم بلنگز،ثاقب محمود سمیت دیگر صارفین کی جانب سے شدید ردعمل دیکھنے میں آیا۔

انگلش فاسٹ بولر جوفرا آرچرنے اس ٹویٹ کے جواب میں لکھا” کیا آپ ٹھیک ہیں؟ مجھے آپ ٹھیک نہیں لگ رہیں۔

 

انگلینڈ کرکٹ ٹیم کے بیٹسمین سیم بلنگز نے اس ٹویٹ کو ناپسندیدہ قراردیتے ہوئے مصنفہ کے ٹوئٹراکاؤنٹ کو رپورٹ کرنے کا کہا۔

فاسٹ بالرثاقب محمود نے بھی بنگلہ دیشی مصنفہ کی ٹویٹ کوناقابل یقین قرار دیتے ہوئے لکھا ” نفرت انگیز ٹویٹ، نفرت انگیزشخصیت ”۔

بین ڈکٹ نے لکھا ” اس ایپ کا یہ بھی مسئلہ ہے کہ لوگ ایسی نفرت انگیز بات کرسکتے ہیں، یہ اکاؤنٹ رپورٹ ہونا چاہیے ”۔

تسلیمہ نسرین نے اپنے اس ٹویٹ کی وضاحت میں ایک اور ٹویٹ کرتے ہوئے لکھا ” نفرت کرنے والے بخوبی جانتے ہیں کہ معین علی کے بارے میں میرا ٹویٹ ایک طنزتھا لیکن انہوں نے یہ مجھے ذلیل کرنے کے لیے یہ معاملہ اٹھایا کیونکہ میں مسلم معاشرے کو سیکولر بنانے کی کوشش کرتی ہوں ”۔

جوفراآرچرنے تسلیمہ کو جواب دیا ” کیا یہ طنز تھا؟ یہاں کوئی نہیں ہنس رہا حتٰی کہ آپ خود بھی نہیں، کم سے کم جو آپ کرسکتی ہیں وہ یہ ہے کہ ٹویٹ ڈیلیٹ کردیں ”۔

نفرت انگیز ٹویٹ پرانگلش کرکٹرز کی جانب سے شدید ردعمل آنے کے بعد تسلیمہ نے اپنی ٹویٹ ڈیلیٹ کردی۔

اس حوالے سے تبصرہ کرتے ہوئے معین کے والد نے کہا کہ ” اپنے بیٹے سے متعلق تسلیمہ کا مذموم تبصرہ پڑھ کر شدید صدمہ پہنچا۔

کرکٹرکے والد منیر کے مطابق تسلیمہ نے وضاحتی ٹویٹ میں جہاں ااصل بات کو طنزیہ بتایا ہے ، وہیں یہ بھی کہا ہے کہ وہ بنیاد پرستی کے خلاف ہیں۔

انگلینڈ کرکٹ ٹیم کے کھلاڑیوں کے علاوہ سوشل میڈیا صارفین نے بھی تسلیمہ نسرین کے اس طرزعمل پر شدید تنقید کرتے ہوئے مختلف ٹویٹس کیں۔

 

یہ پہلا موقع نہیں کہ تسلیمہ کو مخالفت کا سامنا کرنا پڑا ہو، وہ ماضی میں بھی تنازعات کو جنم دیتی رہی ہیں، 1994 میں اسلام پر تنقید کے الزام میں جان سے مارنے کی دھمکیاں ملنے کے بعد وہ بنگلہ دیش سے سویڈن چلی گئی تھیں۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے :

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube