Saturday, October 24, 2020  | 6 Rabiulawal, 1442
ہوم   > Latest

وائٹ ہاوس کے باورچی غائب ہوگئے

SAMAA | - Posted: Jan 16, 2019 | Last Updated: 2 years ago
SAMAA |
Posted: Jan 16, 2019 | Last Updated: 2 years ago

امریکا میں تاریخ کے بدترین شٹ ڈاون کے بعد وائٹ ہاوس کے باورچی کام چھوڑ کر چلے گئے۔

غیر ملکی خبر رساں ایجنسی کے مطابق وائٹ ہاوس کے باورچيوں نے تنخواہ نہ ملنے پر کھانا بنانا چھوڑ ديا۔ یہی وجہ ہے کہ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی دعوت پر وائٹ ہاؤس آنے والی امریکی فٹ بال ٹیم کو لذیذ کھانوں کے بجائے ٹرمپ نے اپني جيب سے پيسے خرچ کرکے برگر اور پيزا کھلائے۔

میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے ٹرمپ کا کہنا تھا کہ اس کھانے کے پیسے انہوں نے اپنی جیب سے ادا کیے ہیں۔ امریکا میں بد ترین شٹ ڈاؤن کی وجہ سے جہاں حکومتی امور چلانے میں دشواریاں پیش آرہی ہیں، جس کے باعث باورچی سمیت کچھ دیگر عملہ چھٹیوں پر چلا گیا۔

فٹ بال ٹيم کے چند کھلاڑيوں نے خوشي خوشي پيزا اور برگر پر ہاتھ صاف کيا۔ کچھ نے فاسٹ فوڈ پيش ہونے پر منہ بنايا۔ سوشل ميڈيا پر بھي امريکي صدر کي طرف سے وائٹ ہاوس ميں فاسٹ فوڈ کھلائے جانے پر چرچا جاري ہے۔

سوشل میڈیا پر وائرل ویڈیوز میں دیکھا جا سکتا ہے کہ صدر ٹرمپ یہ کہہ رہے ہیں کہ ” يہ سب کھانا امريکي ہے، يہ بہت اچھا کھانا ہے، نيشنل چيمپين ٹيم ہماري مہمان ہے، کرمسن ٹائيگرز انہوں نے الاباما کےخلاف اچھا ميچ کھيلا اور وہ سب يہاں کمرے سے باہر موجود ہيں، آپ ان کو يہاں ديکھيں، يہاں بہت سارا کھانا ہے، يہاں پيزا ہے، 300 ہيم برگرز ہيں اور بہت سارے فرنچ فرائز ہيں”۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے :

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
WhatsApp FaceBook
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube