ہوم   > سوشل میڈیا میں

گوگل کا اردو ادب کے شہنشاہ غالب کو خراج تحسین

SAMAA | - Posted: Dec 27, 2017 | Last Updated: 2 years ago
SAMAA |
Posted: Dec 27, 2017 | Last Updated: 2 years ago

کراچی : اردو زبان کے سب سے بڑے شاعرمرزا اسد اللہ خاں غالب کا آج دو سو بيس واں يوم پيدائش ہے، اہل ادب غالب کو ياد کررہے ہيں۔ گوگل نے اردو کے عظیم شاعر مرزا اسد اللہ خان غالب کی 220 ویں سالگرہ کے موقعے پر انہیں زبردست خراج تحسین پیش کرتے ہوئے ڈوڈل...

کراچی : اردو زبان کے سب سے بڑے شاعرمرزا اسد اللہ خاں غالب کا آج دو سو بيس واں يوم پيدائش ہے، اہل ادب غالب کو ياد کررہے ہيں۔

گوگل نے اردو کے عظیم شاعر مرزا اسد اللہ خان غالب کی 220 ویں سالگرہ کے موقعے پر انہیں زبردست خراج تحسین پیش کرتے ہوئے ڈوڈل متعارف کرادیا۔

اسد اللہ خان غالب مملکت اردو ادب کے شہنشاہ ہیں دو صدیاں گزرنے کے باوجود اقلیم سخن پر مرزا غالب کی گرفت مضبوط سے مضبوط تر ہو رہی ہے۔

پوچھتے ہیں وہ کہ غالبؔ کون ہے

کوئی بتلاؤ کہ ہم بتلائیں کیا

ستائيس دسمبرسترہ سو چھيانوے غالب آگرہ ميں پيدا ہوئے، جلد يتيم ہوگئے، مغليہ کا پر آشوب دور تھا، دلي کا زوال غالب کي شاعري پراثر انداز ہوا، معاشي کسمپرسي اوراولاد سے محرومي نے شب غم کا جوش الفاظ ميں امڈ آيا۔

رگوں میں دوڑتے پھرنے کے ہم نہیں قائل

جب آنکھ ہی سے نہ ٹپکا تو پھر لہو کیا ہے

ابتدا ميں دربار مغليہ سے غالب کي پذيرائي ممکن نہ ہوئي، بعد ازاں بہادر شاہ ظفرنے نہ صرف وظيفہ مقرر کيا بلکہ نجم الدولہ دبیر الملک نظام جنگ کا خطاب عطا فرمایا۔

ہیں اور بھی دنیا میں سخن ور بہت اچھے

کہتے ہیں کہ غالبؔ کا ہے انداز بیاں اور

غالب نے اردو غزل کو محض 1800 اشعار دیئے ، تاہم ان کا نام آج بھی زندہ و جاوید ہے، يہي تھا وہ انداز گفتگو جواردو شاعري پرغالب آگيا، اٹھارہ سو ستاون کي جنگ آزادي کے بعد دلي اجرا ديار بن گيا، غالب کي شاعري کچھ اور غم انگيز ہوئي غالب نے اٹھارہ سو انہتر ميں دنيا کو الوداع کہا

ہوئی مدت کہ غالبؔ مر گیا پر یاد آتا ہے

وہ ہر اک بات پر کہنا کہ یوں ہوتا تو کیا ہوتا

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
WhatsApp FaceBook
 
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube