Thursday, January 27, 2022  | 23 Jamadilakhir, 1443

بلوچستان میں ریلی اور دھرنوں پر سزاؤں کااعلان، آرڈیننس جاری

SAMAA | - Posted: Nov 27, 2021 | Last Updated: 2 months ago
SAMAA |
Posted: Nov 27, 2021 | Last Updated: 2 months ago

بلوچستان میں احتجاجی ریلی اور دھرنے پر 6 ماہ تک قید اور 10 ہزار روپے جرمانہ عائد کیا جائے گا، گورنر بلوچستان نے کریمنل لاء ترمیمی آرڈیننس جاری کردیا۔

گورنر بلوچستان ظہور علی آغا کی جانب سے جاری آرڈیننس صوبہ بھر میں فوری طور پر نافذ العمل ہوگا، آرڈننس کے اجراء کا مقصد عوام الناس کی روز مرہ زندگی، آمد و رفت اور آزادانہ نقل و حمل میں رکاوٹ پیدا کرنے کے کسی بھی عمل کو روکنا ہے۔

آرڈیننس کے ذریعے گلی، سڑک یا ہائی وے پر ریلی، جلوس نکالنا اور دھرنا دینا ممنوع قرار دیا گیا ہے، آرڈیننس کی خلاف ورزی کرنیوالوں کو 3 سے 6 ماہ سزا اور 10 ہزار روپے جرمانے کی سزا دی جا سکے گی۔

حکام کے مطابق آرڈننس کے تحت سڑکوں پر ریلی جلوس نکالنے اور دھرنا دینے والوں کو وارنٹ کے بغیر بھی گرفتار کیا جاسکے گا۔

ارڈننس کے تحت سیشن کورٹ اور فرسٹ کلاس مجسٹریٹ جرم ثابت ہونے پر قید و جرمانے کی سزا دینے کے مجاز ہوں گے۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube