Wednesday, December 8, 2021  | 3 Jamadilawal, 1443

سوات: تازہ پھلوں کو ضائع ہونے سے بچانے کا طریقہ

SAMAA | - Posted: Oct 23, 2021 | Last Updated: 2 months ago
SAMAA |
Posted: Oct 23, 2021 | Last Updated: 2 months ago

دھوپ میں رکھ کر خشک میوہ جات تیار ہورہے ہیں

سوات کی تحصیل مٹہ میں تازہ پھلوں کو ضائع ہونے سے بچانے اور انہیں سالہا سال ہی عوام کے لیے محفوظ بنانے کا طریقہ اپنا لیا گیا۔

چھوٹی سے مشین میں پھلوں سے چھلکے اتار لیے جاتے ہیں، پھر ان پھلوں کو کاٹ اور صاف کرکے دھوپ میں رکھا جاتا ہے، جس کے بعد خشک میوہ تیار ہو جاتا ہے۔

کسانوں کا کہنا تھا ہماری کوشش ہے کہ جو پھل پک کر ضائع ہوتے ہیں یا مارکیٹ میں نہیں پہنچ سکتے اس کو ہم بچائے اور اس کو خشک میوے کی صورت میں ہر موسم میں عوام کو فراہم کر دیں۔

انکا کہنا تھا کہ اگر حکومت ہمارے ساتھ تعاون کرکے مشینری لگائے تو اس سے ہمیں آسانی ہوگی، ہم اس کو برآمد کریں گے جس سے کسانوں سمیت حکومت کو بھی فائدہ ہوگا۔

خشک میوں کی صورت میں سوات کے یہ خوش ذائقہ اور طاقت و توانائی سے بھرپور پھل اب فی کلو 600 روپے سے ایک ہزار روپے میں دستیاب ہوں گے۔

سوات میں آڑو، جاپانی پھل، سیب، آلوبخارا اور خوبانی سمیت کئی اقسام کے پھل پیدا ہوتے ہیں۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube