Friday, December 3, 2021  | 27 Rabiulakhir, 1443

نیب ترمیمی آرڈیننس کیخلاف درخواست ہائیکورٹ میں باقاعدہ سماعت کیلئے منظور

SAMAA | - Posted: Oct 21, 2021 | Last Updated: 1 month ago
SAMAA |
Posted: Oct 21, 2021 | Last Updated: 1 month ago

تمام فریقین کو نوٹس جاری کردیئے ہیں

اسلام آباد ہائی کورٹ نے نیب ترمیمی آرڈیننس کے خلاف درخواست باقاعدہ سماعت کیلئے منظور کرلی ہے۔اسلام آباد ہائیکورٹ نے حکومت، سیکرٹری قومی اسمبلی و سینیٹ سے جواب طلب کرلیا ہے۔

جمعرات کو چیف جسسٹس اطہر من اللہ نے شہری عبدالطیف قریشی کی درخواست پر سماعت کی۔نیب کے نئے ترمیمی آرڈیننس سے متعلق اسلام آباد ہائیکورٹ نے درخواست باقاعدہ سماعت کیلئے منظور کرتے ہوئے تمام فریقین کو نوٹس جاری کردیئے ہیں۔ عدالت نے 3 ہفتوں میں آرڈیننس پراٹھائے گئے اعتراضات پر تحریری جواب طلب کرلیا ہے۔

وکیل درخواست گزار نے موقف اپنایا کہ ترمیمی آرڈیننس کے ذریعے بڑی کلاس کو نیب کے دائرہ کار سے نکال دیا گیا، یہ کرپشن کو جواز فراہم کرنے کی کوشش ہے۔

نیب ترمیمی آرڈیننس 2021ء صدر مملکت کے دستخط سے نافذ

عدالت نے دلائل سننے کے بعد وفاقی حکومت کے ساتھ سیکرٹری قومی اسمبلی اور سینیٹ کو بھی نوٹس جاری کردیا جبکہ اٹارنی جنرل کو معاونت کیلئے ذاتی حیثیت میں طلب کرلیا۔

دوسری جانب کڈنی ہلز ریفرنس میں سلیم مانڈوی والا نے بھی آرڈیننس کا سہارا لے لیا۔ سابق ڈپٹی چیئرمین سینیٹ  نے کیس ایف بی آر یا ایس ای سی پی منتقل کرنے کی درخواست دائر کردی۔

اشتہارات کے غیر قانونی ٹھیکوں میں سینیٹ میں اپوزیشن لیڈر یوسف رضا گیلانی کے شریک ملزم فاروق اعوان نے بھی نئے آرڈیننس کے تحت نیب کا دائرہ اختیار چیلنج کردیا۔ عدالت نے دونوں درخواستوں پر نیب سے جواب طلب کرلیا۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube