Monday, December 6, 2021  | 30 Rabiulakhir, 1443

فوادچوہدری کو تھپڑمارنے کی دھمکی کیوں دی؟عامرلیاقت نے بتادیا

SAMAA | - Posted: Oct 20, 2021 | Last Updated: 2 months ago
SAMAA |
Posted: Oct 20, 2021 | Last Updated: 2 months ago

رکن قومی اسمبلی عامرلیاقت کا کہنا ہے کہ فوادچوہدری کو تھپڑمارنے کی بات اس لیے کی تھی کیوں کہ انہوں نے کہا تھا کہ عامرلیاقت کا استعفیٰ تو روز آتا ہے۔

عامرلیاقت کا کہنا تھا انہوں نے اس بات پر فوادچوہدری کو جواب دیا کہ وہ میرے معاملات سے دور رہیں ورنہ میرا تھپڑ ان کے تھپڑ سے بھاری ثابت ہوگا تاہم ان کا کہنا ہے کہ فوادچوہدری سے میری دوستی اور ایک گھریلو تعلق ہے اس لیے فوادچوہدری نے میرے بات کا جواب نہیں دیا۔

انہوں نے کہا کہ اگر مولانا فضل الرحمان صاحب مہنگے ہیں تو پاکستان میں پھر مہنگائی ہوگی لیکن اگر سستے ہوئے یعنی ہرکسی کو دستیاب ہیں تو اس کا مطلب ملک میں مہنگائی نہیں ہے۔

عامرلیاقت کا کہنا تھا کہ ملک میں اس قدر مہنگائی ہے کہ اپوزیشن کو تو بہت پہلے نکلنا چاہیے تھا مگر مولانا فضل الرحمان کا ملک میں مہنگائی کے خلاف نکلنا باعث حیرت ہے۔

انہوں نے کہا تحریک انصاف سے استعفیٰ دے چکا ہوں اور اب اس جماعت سے میرا کوئی تعلق نہیں اس لیے میرے نام کے ساتھ تحریک انصاف نہ لکھا کرے۔

عامرلیاقت کا کہنا تھا کہ علی امین گنڈاپور کا عوام کو کھانا کم کھانے کا مشورہ دینا قابل مذمت ہے لوگ ایسا کیوں کریں انہوں نے تو مہنگائی ختم کرنے کے لیے ووٹ دیا تھا۔

انہوں نے کہا کہ ملک میں مہنگائی بالکل ہے اور اس کی ذمہ دار بھی حکومت ہے تاہم استعفیٰ دینا ہر مسئلے کا حل نہیں صرف وزارتوں میں تبدیلی کی ضرورت ہے۔

عامرلیاقت کا کہنا تھا کہ اپوزیشن کو مہنگائی کے خلاف بہت پہلے جاگنا چاہیے تھا اب اس وقت مہنگائی کے خلاف نکلنا باعث تعجب ہے۔ انہوں نے کہا اپوزیشن کا لانگ مارچ نظر نہیں آرہا۔

پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے رہنما مسلم لیگ ن حنا پرویز بٹ کا کہنا تھا کہ پی ڈی ایم کی تحریک ضلعی سطح پر شروع ہوچکا ہے جس کا فیصلہ حالیہ اجلاس میں کیا گیا تھا۔

حنا پرویز بٹ کا کہنا تھا کہ عوام تو خود حکومت کے خلاف نکلنا چاہ رہے ہیں ہم تو صرف ان کو ایک پلیٹ فارم دے رہے ہیں کیوں کہ عوامی مسائل کو اجاگر کرنا اپوزیشن کی ذمہ داری ہے۔

انہوں نے کہا کہ ایم وی ایم دھاندلی کا منصوبہ ہے کیوں کہ انہیں پتہ ہے کہ اگلے الیکشن میں عوام انہیں ووٹ نہیں دیں گے۔

رہنما ن لیگ کا کہنا تھا کہ وفاقی کابینہ میں 50 سے زائد وزراء ہیں جبکہ چار چار وزرائے خزانہ بدل دیے گئے مگر اصل بات یہ ہے کہ یہ حکومت نااہل اور تاریخ کی کرپٹ ترین حکومت ہے۔

حنا پرویز بٹ کا کہنا تھا کہ ضلعی سطح پر احتجاج اور ریلیوں کے بعد لانگ مارچ کا اعلان کردیا جائے گا اور ہوسکتا ہے کہ یہ حکومت اس سے قبل خود اپنی نااہلیوں کے باعث ہی گرجائے۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube