Tuesday, December 7, 2021  | 2 Jamadilawal, 1443

گوجرانوالہ: شاہی دورکا کوٹلی مقبرہ شاندار ماضی کا آئینہ دار

SAMAA | - Posted: Oct 18, 2021 | Last Updated: 2 months ago
SAMAA |
Posted: Oct 18, 2021 | Last Updated: 2 months ago

مقبرےکوشہنشاہ اکبرنےاپنےقاضی عبدالنبی کےلئے تعمیر کرایا تھا

گوجرانوالہ کے قصبے کوٹلی ساہیاں میں مغل اعظم شہنشاہ جلال الدین اکبر کا اپنے قاضی کے لئے تعمیر کیا گیا کوٹلی مقبرہ خستہ حالی کا شکار ہوگیا۔

مغلیہ دور میں گوجرانوالہ میں تعمیر ہونے والا یہ مقبرہ شاہکار ہے۔ ہریالی میں گھرا  تعمیراتی مہارت کا نادر نمونہ خوبصورت چار میناروں پر مشتمل ہے۔ دور سے دیکھنے پرخوبصورت  لگنے والا مقبرہ قریب جاتے ہی  کھنڈرات کے مناظر پیش کرتا ہے۔

اس مقبرے کو شہنشاہ اکبر نے اپنے قاضی عبدالنبی کے لئے16ویں صدی میں تعمیر کرایا تھا اوراس کا موازنہ تاج محل سے کیا جاتا تھا۔ تاہم  اب یہاں کے خستہ حال درو دیوار،اکھڑی اینٹیں، ٹوٹے مینار یہاں کی آپ بیتی سنا رہے ہیں۔

اس مقبرے کے نیچے ایک لمبی سرنگ میں تین قبریں بھی موجود ہیں جن میں سے ایک قاضی عبدالنبی  اور باقی ان کے دو بیٹوں کی ہیں۔ یہ سرنگ بھی خستہ حالی کے باعث زمین بوس ہونےکو ہے۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube