Wednesday, January 26, 2022  | 22 Jamadilakhir, 1443

مسلم لیگ نون کا مفاہمتی اجلاس، اسٹيبلشمنٹ سے مفاہمت کی دوبارہ بازگشت

SAMAA | - Posted: Oct 15, 2021 | Last Updated: 3 months ago
Posted: Oct 15, 2021 | Last Updated: 3 months ago

پاکستان مسلم ليگ نون کے مشاورتی اجلاس ميں اسٹيبلشمنٹ سے مفاہمت کی بازگشت دوبارہ سنائی دی گئی ہے۔

سماء کے نمائندہ خصوصی نعیم اشرف بٹ نے بتایا ہے کہ نون لیگ کا خفيہ اجلاس 12 اکتوبر کو شہبازشريف کی زيرصدارت ہوا جس ميں پارٹی کے 2 مفاہمتی رہنماؤں نے کہا کہ اس وقت حکومت کے ساتھ اداروں کی ٹينشن سےفائدہ اٹھانا چاہيےاور اسٹيبلشمنٹ کا ساتھ دينا ہوگا۔ اس تجويز پر شاہد خاقان عباسی سميت کچھ رہنما خاموش رہے تاہم پارٹی صدر کی جانب سے اس کی مخالفت نہيں کی گئی۔

اس اجلاس ميں مريم نواز،پرویزرشیداور جاوید لطیف موجود نہيں تھے۔اجلاس ميں اکثريت مفاہمت کے حامی رہنماؤں کی تھی۔اجلاس میں خواجہ آصف،سعد رفيق،ايازصادق،رانا تنوير،راناثناء اللہ اور مريم اورنگزيب بھی اجلاس میں موجود تھيں۔

 ذرائع کےمطابق اجلاس ميں اس بات پر کچھ رہنماؤں نے اطمينان کا اظہار کيا کہ کم ازکم شفاف اليکشن کی حد تک نوازشريف نے مفاہمت کی بات کی ہے اور اس بات کو آگےبڑھايا جائے گا۔

سماء نے اس خبر پر نون ليگ کی ترجمان مريم اورنگزيب سےموقف لينےکےليےبارہا مرتبہ رابطہ کيا ليکن انہوں نے کوئی جواب نہیں ديا۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube