Wednesday, October 27, 2021  | 20 Rabiulawal, 1443

فیصل آباد موٹروے پرلڑکی کا گینگ ریپ، مرکزی ملزم گرفتار

SAMAA | - Posted: Oct 14, 2021 | Last Updated: 2 weeks ago
SAMAA |
Posted: Oct 14, 2021 | Last Updated: 2 weeks ago

Gojra motorway

گوجرہ کے قریب فیصل آباد موٹروے ایم4 پر 18سالہ لڑکی کا گینگ ریپ کرنے کے کیس میں مرکزی ملزم کو پولیس نے گرفتار کر لیا۔

پولیس نے واقعے کا مقدمہ تین ملزمان کے خلاف درج کرکے کارروائی شروع کر دی ہے۔ ملزمان میں ایک خاتون اور دو مرد شامل ہیں جبکہ بقیہ دو کی گرفتاری کے لیے چھاپے مارے جا رہے ہیں۔

ایف آئی آر کے مطابق فیصل آباد موٹروے پر گوجرہ کے قریب ٹوبہ ٹیک سنگھ کی لڑکی کے ساتھ تین ملزمان نے اسلحہ کے زور پر گاڑی میں گینگ ریپ کیا۔

لڑکی کی خالہ نے ایف آئی آر میں بتایا کہ بھانجی کو فون پر میسج کرکے انٹرویو کے لیے گوجرہ بلوایا گیا تھا، ٹوبہ ٹیک سنگھ سے گوجرہ پہنچنے پر ملزمان نے کہا بھانجی کو گاڑی میں ساتھ بھیج دیں۔ جس گاڑی میں بھانجی کو لے جایا گیا اس میں ایک خاتون اور دو مرد تھے، ملزمان نے موٹر وے پر بھانجی کا گینگ ریپ کیا جس کے بعد فیصل آباد انٹر چینج پر پھینک کر چلے گئے۔

ڈی پی او سردار موارہن خان کے مطابق گرفتار ملزم نے لڑکی سے ریپ کا اعتراف کرليا، ملزم سے گاڑی قبضے ميں لے لی جبکہ پستول بھی برآمد کی گئی۔

ڈی پی او سردار موارہن خان کا کہنا ہے کہ خاتون سمیت دو ملزمان نے لڑکی کو موٹروے پر گینگ ریپ کا نشانہ بنایا اور مرکزی ملزم حماد گرفتار کرلیا گیا ہے۔ فرار ملزمان کو جلد گرفتار کرلیں گے۔

ڈی پی او نے بتایا کہ متاثرہ لڑکی کی درخواست پر مقدمہ درج کیا گیا، ریپ کرنے والے ملزمان کو سخت سزا دلوائیں گے۔

Gojra rape accused

پولیس کے مطابق متاثرہ لڑکی کا میڈیکل کروا لیا گیا ہے، اب ڈی این اے کروایا جا رہا ہے اور نمونے لاہور بھجوا دیے گئے ہیں۔

دوسری جانب وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار نے گوجرہ کے قریب موٹروے پر لڑکی کے ساتھ گینگ ریپ کے واقعہ کا نوٹس لیتے ہوئے آر پی او فیصل آباد سے رپورٹ طلب کر لی ہے۔ انہوں نے ملزمان کی فی الفور گرفتاری کا حکم دیا۔

وزیراعلیٰ پنجاب نے کہا کہ ملزمان کو قانون کی گرفت میں لا کر قانون مطابق کارروائی کی جائے، متاثرہ لڑکی کو انصاف کی فراہمی کے تمام تقاضے پورے کیے جائیں۔

لاہور موٹروے ریپ کیس

اس سے قبل، 9 ستمبر2020 کو لاہور موٹروے پر رات کے وقت ریپ کا واقعہ پیش آیا تھا۔

خاتون اپنے کم سن بچوں کے ساتھ لاہور سے براستہ سیالکوٹ موٹروے گوجرانوالہ جا رہی تھی کہ راستے میں گاڑی کا پیٹرول ختم ہوگیا۔ اس دوران 2 ملزمان آئے اور خاتون کو بچوں سمیت قریبی کھیتوں میں لے گئے جہاں ملزمان نے خاتون کو ریپ کا نشانہ بنایا اور قیمتی سامان بھی لوٹ کر فرار ہوگئے، جس میں 1لاکھ روپے نقدی، زیورات اور ڈیبٹ کارڈ و دیگر اہم اشیاء شامل تھیں۔

واقعے میں ملوث ایک ملزم شفقت عرف بگا نے خود ہی گرفتاری دیدی تھی جبکہ دوسرا ملزم عابد ملہی ایک ماہ تک روپوش رہا اور آخر کار فیصل آباد سے گرفتار ہوگیا تھا۔ ان کےخلاف تھانہ گجرپورہ نے مقدمہ درج کیا۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube