Wednesday, October 27, 2021  | 20 Rabiulawal, 1443

پاکستانی عدالتوں کےفیصلےانسانی حقوق پرعمل درآمد کی مثال ہیں،فواد

SAMAA | - Posted: Oct 14, 2021 | Last Updated: 2 weeks ago
SAMAA |
Posted: Oct 14, 2021 | Last Updated: 2 weeks ago

Fawad Ch On TTP SOT 01-10

وفاقی وزیراطلاعات فوادچوہدری نے کہا ہے کہ انسانی حقوق کی پاسداری کے لیے پاکستان کی عدلیہ کے فیصلے قابل مثال ہیں۔

فواد چوہدری نے اپنی ٹویٹ میں کہا ہے کہ سپریم کورٹ اور چیف جسٹس پر فخر ہے۔ انھوں نے کہا کہ جب ہمارے پڑوسی ملک کی عدالتیں نفرت انگیز عناصر اور شدت پسندوں کے ہاتھوں یرغمال بنی ہوئی ہیں ، پاکستان کی عدالتیں انسانی حقوق کے نفاذ کے نئے پیمانے کا تعین کررہی ہیں۔ انھوں نے چیف جسٹس کے فیصلے کی تعریف بھی کی۔

سپریم کورٹ میں بدھ کو کرک مندر حملہ ازخود نوٹس کیس کی سماعت ہوئی۔ عدالت نے 1 ماہ میں مندر حملہ واقعہ میں ملوث افراد سے رقم وصول کرنے کا حکم دے دیا۔

سپریم کورٹ کا1ماہ میں کرک مندر حملے میں ملوث افراد سےرقم کی وصولی کا حکم

عدالت نے حکم دیا کہ چیف سیکرٹری خیبر پختونخوا 1 ماہ میں 3 کروڑ 30 لاکھ روپے سے زائد رقم ہر ملزم میں برابر تقسیم کرکے وصول کریں۔

مندرمیں کیا ہوا تھا:۔

پچھلے برس دسمبر میں ضلع کرک میں مشتعل افراد نے ہندوؤں کے ایک مندر کو جلا کر مسمار کر دیا تھا۔اس واقعے میں پولیس کی ایک موٹر سائیکل بھی نذر آتش کردی گئی تھی۔ مقامی افراد نے الزام لگایا تھا کہ  ہندو برادری مندر کی غیر قانونی طور پر توسیع کررہی تھی،جس کی اطلاع پولیس کو بھی دی گئی تاہم کوئی ایکشن نہیں لیا گیا۔ وفاقی وزیر انسانی حقوق شیریں مزاری کا کہنا تھا کہ مقامی انتظامیہ کے مطابق واقعے کا مقدمہ درج کیا گیا۔

کرک، مندر جلانے کے مرکزی کردار مولوی سمیت 14 گرفتار

جنوری میں وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا محمود خان نے بتایا تھا کہ صوبائی حکومت مندر کی دوبارہ تعمیر کوجلد یقینی بنائے گی، مندر کی دوبارہ تعمیر کے سلسلے میں متعلقہ حکام کو احکامات جاری کردیے گئے ہیں۔وزیراعلی خیبرپختونخوا نے کہا تھا کہ اقلیتوں کے مقدس مقامات کے تحفظ کو ہر صورت یقینی بنایا جائے گا۔

رواں برس فروری میں سپریم کورٹ نے کرک میں مشتعل مظاہرین کے حملے میں تباہ ہونے والا مندر کی فوری تعمیر کا حکم دیا تھا۔

کرک:نذرِآتش کیےگئے مندرکودوبارہ تعمیر کرنےکااعلان

واضح رہے کہ قیام پاکستان سے قبل کا یہ مندر برصغیر کی تقسیم کے بعد بند کردیا گیا تھا تاہم 2015ء میں سپریم کورٹ کی ہدایت پر اسے کھولا گیا۔ مقامی ہندو اور مسلم برادری کے درمیان دسمبر2020 میں مندر سے ملحقہ اراضی پر تعمیر کے حوالے سے ایک معاہدہ بھی طے پایا تھا۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube