Monday, January 24, 2022  | 20 Jamadilakhir, 1443

ہرنائی زلزلہ: پولیس اسٹیشن میں دراڑیں پڑ گئیں

SAMAA | - Posted: Oct 7, 2021 | Last Updated: 4 months ago
Posted: Oct 7, 2021 | Last Updated: 4 months ago

ہرنائی میں زلزلے نے جہاں کچے پکے مکانات کو شدید نقصان پہنچایا وہیں پولیس تھانہ صدر کی عمارت میں بھی دراڑیں پڑ گئیں۔ پولیس اہلکار کا کہنا ہے کہ خستہ حال عمارت کسی بھی وقت گر سکتی ہے، عملے اور قیدیوں کی زندگی کو خطرہ ہے۔

ہرنائی میں زلزلے کے باعث پولیس تھانہ صدر کی عمارت بری طرح متاثر ہوئی ہے، دیواروں اور چھتوں میں دراڑیں پڑ گئیں۔

پولیس محرر ظہیر نے سماء ٹی وی سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ پولیس اسٹیشن کی عمارت مکمل طور پر خستہ حال ہوگئی ہے، کمروں اور حوالات کی دیواروں میں دراڑیں پڑگئیں، عمارت کی خستہ حالی کے باعث پولیس اہلکاروں اور قیدیوں کی زندگی خطرے میں ہے۔

انہوں نے کہا کہ اگر دوبارہ زلزلہ آیا تو عمارت زمین بوس ہوجائے گی۔

سماء ٹی وی کے مطابق بابر محلہ ہرنائی میں موجود پولیس اسٹیشن سے قیدیوں کو نکال کر کھلی جگہ پر منتقل کردیا گیا ہے، جس سے سیکیورٹی خدشات بھی پیدا ہوگئے ہیں۔

واضح رہے کہ  گزشتہ رات 3 بج کر 2 منٹ پر ہرنائی سمیت بلوچستان کے مختلف شہروں میں 5.9شدت کا زلزلہ آیا تھا، جس میں کم از کم 20 افراد جاں بحق اور 300 سے زائد زخمی ہوگئے۔

زلزلے کے جھٹکے کوئٹہ، چمن، زیارت، ژوب، سبی، ہرنائی، لورالائی، دکی، پشین، قلعہ سیف اللہ اور مسلم باغ میں محسوس کئے گئے۔

زلزلہ پیما مرکز کے مطابق زلزلے کا مرکز ہرنائی کے قریب 15 کلومیٹر گہرائی میں تھا۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube