Saturday, January 22, 2022  | 18 Jamadilakhir, 1443

لاہور: کمسن بچے کے قتل میں ملوث والد گرفتار

SAMAA | - Posted: Oct 6, 2021 | Last Updated: 4 months ago
Posted: Oct 6, 2021 | Last Updated: 4 months ago

Lahore accused

لاہور علاقے ساندہ کلاں میں 30 ستمبر کو مبینہ تشدد سے جاں بحق ہوجانے والے 9 ماہ کے بچے کے باپ غلام مصطفیٰ کو پولیس نے گرفتار کرلیا۔

پولیس کے مطابق ملزم کا بيان ريکارڈ کرکے تفتيش کی جا رہی ہے، بچے کے باپ سمیت دادی اور پھوپھا مقدمے ميں نامزد ہیں۔

بچے کی والدہ کنول شہزادی کی درخواست پر ان کے شوہر غلام مصطفیٰ، ساس ریحانہ اور رشتے کے نندوئی فیصل کے خلاف تشدد اور حبس بیجا کی دفعات کے تحت مدمہ درج کیا گیا۔

کنول شہزادی کا ایف آئی آر میں کہنا تھا کہ ملزم 30 ستمبر کو اس کی آنکھوں کے سامنے اس کے کمسن بچے محمد موسیٰ پر تشدد کرتا رہا اور وہ رو رو کر دہائیاں دیتی رہی لیکن شوہر باز نہ آیا۔ اس دوران کنول نے اپنے سسر کو کہتے سنا کہ بچہ تشدد سے انتقال کرگیا ہے جس پر وہ  بیہوش ہوگئی اور اسے اسپتال لے جایا گیا، جہاں ہوش میں آنے کے بعد اسے پتہ چلا کہ بچے کی تدفین بھی کردی گئی ہے۔

بچے کی ماں کا کہنا ہے کہ گھر واپس آنے کے بعد جب اس نے پولیس میں رپورٹ کرانے کی دھمکی دی تو اسے بندوق کے زور پر ایک کمرے میں بند کردیا گیا تاہم 2 اکتوبر کو اس کے رشتہ دار وہاں پہنچ گئے اور اس کے سسر کی نشاندہی پر اسے بازیاب کرالیا۔

ایس پی اقبال ٹاؤن کے مطابق ڈسٹرکٹ مجسٹریٹ کو بچے کی قبر کشائی اور پوسٹ مارٹم کے حوالے سے درخواست دے دی گئی ہے۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube