Wednesday, January 26, 2022  | 22 Jamadilakhir, 1443

امام حسین اور شہدا کربلا کا چہلم،ٹریفک پلان جاری

SAMAA | - Posted: Sep 28, 2021 | Last Updated: 4 months ago
SAMAA |
Posted: Sep 28, 2021 | Last Updated: 4 months ago

کراچی سمیت دیگر شہروں میں امام حسین اور شہیدا کربلا کے چہلم کے موقع پر ٹریفک پلان جاری کردیا گیا ہے۔ ٹریفک پولیس حکام کی جانب سے عوام سے تعاون کی اپیل اور متبادل روٹس اختیار کرنے کی ہدایت کی گئی ہے۔

کراچی

جلوس کی گزر گاہ پر دکانیوں کو سیل جب کہ موبائل فون سروس معطل رہے گی۔ کراچی میں چہلم کا مرکزی جلوس دن 1 بجے نشتر پارک سے برآمد ہوا، جو روایتی راستوں سے گزرتا ہوا کھارادر کی تاریخی حسینیاں ایرانیاں امام بارگاہ پر اختتام پذیر ہوگا۔ اس سے قبل علم کا جلوس مارٹن روڈ امام بارگاہ سے تقریبا 9 بجے برآمد ہوا اور نشتر پارک پر اختتام پذیر ہوا۔ ٹریفک پولیس نے چہلم کے موقع پر ٹریفک انتظامات کر لیے ہیں اور جلوس کے متبادل راستوں کی تفصیلات جاری کردی گئی ہیں۔

کراچی میں مرکزی جلوس نشر پارک > سر شاہ نواز بھٹو روڈ > محفل شاہ خراسان > ایم اے جناح روڈ > منسفیلڈ اسٹریٹ > پریڈی اسٹریٹ > دوبارہ ایم اے جناح روڈ > بولٹن مارکیٹ > ببمئی بازارا > کھارادر > نواب محبت خانجی روڈ سے حسینیہ ایرانیاں امام بار گاہ پر اختتام پذیر ہوگا۔

کوئٹہ

کوئٹہ میں شہداء کربلا کے چہلم کا جلوس آج شہداء چوک سے برآمد ہوا۔ جلوس روایتی راستوں سے ہوتا ہوا بحشت زینب قبرستان پر اختتام پذیر ہوگا۔ جلوس کی سیکیورٹی پر 2 ہزار پولیس، 840 ایف سی اور 3 کیو آر ایف کی نفری موجود ہے۔ جلوس کی 60 عدد سی سی ٹی وی کیمروں کے ذریعے مانیٹرنگ کی جا رہی ہے۔ کسی بھی ناگہانی صورت حال سے نمٹنے کے لئے پاک فوج کی نفری بھی اسٹینڈ بائی کی گئی ہے۔  جلوس کے اطراف میں دفعہ 144 نافذ، ڈبل سواری پر پابندی عائد کی گئی ہے۔ محکمہ داخلہ بلوچستان کی جانب سے آج کوئٹہ میں موبائل فون سروس معطل رکھنے کی درخواست کی گئی ہے۔

ملتان

سٹی ٹریفک پولیس ملتان نے چہلم حضرت امام حسینؓ کے جلوس ہائے کے سلسلہ میں ٹریفک روٹ پلان جاری کر دیا ہے۔ حسین آگاہی بازار، حسین آگاہی چوک تا گھنٹہ گھر چوک،گھنٹہ گھر چوک تاکچہری چوک اس کے علاوہ گڑ منڈی، چوک بازار، اندرون حسین آگاہی، اور اندرون بوہڑ گیٹ روڈ بھی ہمہ قسم کی ٹریفک کے لیے بند رہے گا۔ اس سلسلہ میں چیف ٹریفک آفیسر ملتان کی طرف سے ٹریفک وارڈنز کو ہدایات جاری کی گئی ہیں کہ جلوس کے روٹ پر کسی بھی کسی کی گاڑی کو پارک نہ ہونے دیا جائے۔

لاہور

اسلام پورہ تا خیمہ سادات شبیہہ ذوالجناح کے جلوس کا ٹریفک پلان جاری کردیا گیا، ایس پی ٹریفک آصف صدیق انتظامات کی سپرویژن کریں گے۔ 4 ڈ ی ایس پیز صاحبان کی نگرانی میں اضافی نفری تعینات کی جائے گی۔سی ٹی او لاہور منتظر مہدی نے ایمرجنسی گاڑیوں کیلئے راستہ کلیئر رکھنے کی ہدایت کردی۔ سی ٹی او کا کہنا ہے کہ چند پوائنٹس سےٹریفک کو چندمنٹوں کیلئے بند کیاجائے گا جبکہ جلوس گزر تے ہی روڈ کو ٹریفک کیلئے کھول دیا جائے گا۔ پانڈو سٹریٹ ساندہ روڈ سے کسی قسم کی ٹریفک نہیں آ سکتی، بلاک سیداں کی طرف ساندہ روڈ سے ٹریفک کا داخلہ بند ہوگا۔

چوک ساندہ خورد سے براستہ حیدر روڈ نیلی بار، نوری بلڈنگ کی طرف آخری بس اسٹاپ اور نیلی بار چوک کی جانب سے مین بازار ٹریفک نہیں آ سکے گی۔

چوک حیدر روڈ سے ساندہ روڈ اور ٹرن نیلی بار سے نیلی بارچوک ٹریفک کونہیں آنے دیا جائے گا۔ چوک سیکرٹریٹ کی جانب سے اسلام پورہ ٹریفک کو نہیں آنے دیا جائے گا اور ٹرن پیٹرول پمپ نزد دفتر ڈی ایس پی سے سیکرٹریٹ ٹریفک کا داخلہ بند ہوگا۔ چوک استبول سےچوک چرچ اور لاج روڈ سےبھی چوک چرچ ٹریفک کو نہیں آنے دیا جائے گا۔

ان کا کہنا تھا کہ لائبریری روڈ سے ریونیو بورڈ آفس، چوک ٹولٹن مارکیٹ سے چوک پرانی انارکلی اور چوک بوٹا محل کی جانب سے اے جی آفس ٹریفک کا داخلہ بند ہوگا۔ چوک جی پی او سے اے جی آفس، بابا موج دریا سے خیمہ سادات، چوک جین مندر سے ایڈورڈروڈ خیمہ سادات اور فرید کوٹ روڈ سے جانب جین مندر خیمہ سادات ٹریفک بند ہوگی۔

وک جین مندر سے پرانی انارکلی ٹریفک کا داخلہ بند ہوگا، جب کہ آخری بس اسٹاپ سے ٹریفک ساندہ فردوس سینما کی جا سکتی ہے۔ شہری ایم اے او کالج ساندہ روڈ سے آخری بس اسٹاپ ساندہ کی جانب جاسکیں گے۔ جی سی کالج کی طرف ڈائیورٹ چوک ضلع کچہری جب کہ ملتان روڈ سے ٹریفک کو سمن آباد موڑ ، ڈبل سڑکاں ڈائیورٹ کیا جائے گا۔

اسلام آباد / راولپنڈی

[caption id="attachment_2392679" align="alignnone" width="900"] فائل فوٹو[/caption]

راولپنڈی میں شہدائے کربلا کے چہلم کا مرکزی جلوس کمیٹی چوک امام بارگاہ عاشقِ حسین سے برآمد ہوا۔

جلوس کی نگرانی کے لیے 3500 پولیس اہلکار تعینات کیئے گئے ہیں، پولیس کے علاوہ رینجرز کی 2 کمپنیاں مرکزی جلوس کی سیکیورٹی پر تعینات ہیں۔

جلوس کے مقررہ راستوں کی طرف آنے والے تمام راستوں کو سیل کیا گیا ہے۔

جلوس رات 10 بجے امام بارگاہ قدیمیہ بنی چوک پر اختتام پذیر ہو گا، اس موقع پر چہلم کے جلوس کے ارد گرد علاقوں میں موبائل فون سروس بند کی گئی ہے۔

 ڈبل سواری بند

چہلم کے موقع پر محکمہ داخلہ سندھ کی جانب سے موٹر سائیکل کی ڈبل سواری پر پابندی عائد کی گئی ہے۔ محکمہ داخلہ سندھ نے امن وامان کی صورت حال برقرار رکھنے اور ناخوشگوار واقعے سے بچنے کیلئے ڈبل سواری پر پابندی کا اعلان کیا ہے۔

محکمہ داخلہ سندھ کے مطابق آئی جی پولیس اور پاکستان رینجرز ہیڈکوارٹرز سندھ نے اپنے مراسلوں میں چہلم امام حسینؓ کے موقع پر مجالس اور جلوس میں ملک دشمن عناصر کے حملوں کا خطرہ ظاہر کیا ہے۔ صوبائی ادارے کے مطابق کسی بھی ناخوشگوار واقعہ سے بچنے کے لیے حکومت نے فوری طور پر ضروری اقدامات اٹھانے کا فیصلہ کیا ہے۔ اعلامیے میں کہا گیا کہ حکومت سندھ نے اپنے اختیارات کا استعمال کرتے ہوئے 19 اور 20 صفر کو کراچی، حیدرآباد، میرپورخاص، شہید بے نظیر آباد، سکھر اور لاڑکانہ کے مختلف اضلاع میں موٹر سائیکل کی ڈبل سواری پر پابندی عائد کردی ہے۔ پابندی کا اطلاق 12سال سے کم عمر بچوں، خواتین، بزرگ شہریوں اور صحافیوں پر نہیں ہوگا۔

تمام پولیس اسٹیشنز کو ہدایت کی گئی ہے کہ دفعہ 144 کی خلاف کی صورت میں تعزیرات پاکستان کی دفعہ 188 کے تحت شکایات کا اندراج کیا جائے۔

اسکولز

محکمہ تعلیم سندھ نے چہلم کے موقع پر 28 ستمبر کو صوبے بھر کے تمام تعلیمی ادارے بند رکھنے کا اعلان کیا ہے۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube