Saturday, October 16, 2021  | 9 Rabiulawal, 1443

کراچی:اسپتالوں کے بے حسی نوجوان کی جان لے گئی

SAMAA | - Posted: Sep 23, 2021 | Last Updated: 3 weeks ago
Posted: Sep 23, 2021 | Last Updated: 3 weeks ago

امل ایکٹ کے تحت تمام نجی اور سرکاری اسپتال زخمی کے علاج کے پابند ہے

کراچی کے علاقے کریم آباد میں 11 ستمبر کو ٹریفک حادثے میں زخمی نوجوان اسپتالوں کی بے حسی کے باعث 10 گھنٹے تک موت اور زندگی کی کشمکش میں رہنے کے بعد دم توڑگیا۔

ٹریفک حادثے میں زخمی نوجوان کو لوگوں نے فوری اسپتال پہنچانے کے بجائے پہلے ویڈیو بنانا زیادہ ضروی سمھجا اور جب اسپتال کی راہ لی تو سرکاری اور نجی 4 اسپتالوں کی ٹھوکریں کھاتا رہا مگر کسی نے مدد نہیں کی۔

شہریوں کا کہنا ہے کہ نجی اسپتال نے زخمی کے حالت دیکھ کر دروازے سے ہی واپس بھیج دیا اور ضیاءالدین اسپتال والوں نے کچھ دیرعلاج کے بعد عباسی اسپتال ریفر کردیا۔

 ایدھی رضا کار کا کہنا ہے کہ عباسی شہید اور جناح اسپتال انتظامیہ بھی زخمی نوجوان کو ایک دوسرے کی طرف بھیجتے رہے۔

زخمی نوجوان کے والد کا کہنا ہے کہ اسپتالوں کے علاج نہ کرنے کے باعث بیٹے کا انتقال ہوگیا جبکہ بھائی عارف کا کہنا ہے کہ حادثے کے بعد تقریبا 10 گھنٹے تک بھائی زندہ رہا لیکن کسی نے مدد نہیں کی۔

واضح رہے کہ امل ایکٹ کے تحت تمام نجی اور سرکاری اسپتال زخمی کے علاج کے پابند ہے تاہم کسی اسپتال نے بھی قانونو پر عمل نہیں کیا۔

ڈائریکٹر جے پی ایم سی شاہد رسول کا کہنا ہے کہ واقع کی انکوائری کےلئے کمیٹی تشکیل دے دی گئی ہے، جو ہوا وہ غلط اور قابل مذمت ہے ہماری ہمدردیاں متاثرہ فیملی کے ساتھ ہے۔

شاہد رسول کا کہنا ہے کہ زخمی نوجوان کو پہلے ایک نجی اسپتال اور وہاں سے دورسرے نجی اسپتال لے جا گیا جہاں پر ابتدائی طبی امداد کے بعد انہیں عباسی شہید اسپتال لے جانے  کا مشورہ دیا گیا۔

انہوں نے کہا کہ زخمی نوجوان کا عباسی شہید اسپتال میں زیادہ وقت لگا اور اس کے بعد سی ٹی سی اسکین نہ ہونے کے باعث مریض کو جناح اسپتال ریفر کردیا گیا۔

ڈائریکٹر جے پی ایم سی کا کہنا تھا کہ جناح اسپتال کے استقبالیہ پر موجود اسپتال ملازم نے ایدھی رضاکار سے کہا کہ ہم نامعلوم مریضوں کو داخل نہیں کرسکتے اسلئے آپ کو ڈیوٹی پر موجود ڈاکٹر سے خود بات کرنی چاہئے مگر رضاکار ڈاکٹر سے بات کرنے کے بجائے ایمولینس وہی سے واپس عباسی شہید اسپتال لے گیا۔

انہوں نے کہا کہ اس ملازم کو ہم نے شوکاز نوٹس دیا ہے اسے اپنی غلطی کی سزا ضرور ملے گی کیونکہ یہ اس کی ذمہ داری تھی کہ وہ خود زخمی نوجوان کو ڈاکٹر کے پاس لے جاتے۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube