Monday, October 18, 2021  | 11 Rabiulawal, 1443

نیوزی لینڈ ٹیم کےدورہ پاکستان کی منسوخی کی تحقیقات مکمل

SAMAA | - Posted: Sep 21, 2021 | Last Updated: 4 weeks ago
Posted: Sep 21, 2021 | Last Updated: 4 weeks ago

وزیرداخلہ شیخ رشید کا کہنا ہے کہ نیوزی لینڈ کرکٹ ٹیم کے دورہ پاکستان کی منسوخی کی تحقیقات مکمل ہوگئی نیوزی لینڈ ٹیم کو پاکستان میں کوئی سیکیورٹی تھریٹ نہیں تھا۔

سماء کے پروگرام ندیم ملک لائیو میں گفتگو کرتے ہوئے شیخ رشید کا کہنا تھا کہ نیوزی لینڈ ٹیم کی حفاظت کےلئے اتنی فورس لگائی تھی جتنی نیوزی لینڈ کی ٹوٹل فوج بھی نہیں ہے۔

وزیرداخلہ کا کہنا تھا کہ جس دن سے ٹیم پاکستان پہنچی تھی اس دن سے ان کے نخرے اٹھارہے تھے، ایک دو دن میں پریس کانفرس میں دنیا کو ثبوت کے ساتھ بتائیں گے کہ پاکستان میں انہیں کوئی خطرہ نہیں تھا۔

انہوں نے کہا کہ تحقیقات مکمل ہوچکی ہے اور ہمارے پاس جو بھی ثبوت ہے اس پر قوم کو اعتماد میں لے کرمیڈیا میں جاری کریں گے

وزیرداخلہ کا کہنا تھا کہ جس ہوٹل میں نیوزی لینڈ کی ٹیم ٹھری تھی اسی میں آئی ایم ایف اور ورلڈ بینک کے لوگ بھی ٹھرے ہوئے تھے، کرکٹ سے محبت میں نیوزی لینڈ ٹیم کے تمام فرمائشیں پوری کیں۔

شیخ رشید کا کہنا ہے کہ جمعہ کے دن ہمیں اطلاع ملی تھی کہ یہ توڑے بیزار ہیں اسلئے ہم نے ان کو خالی گراونڈ میں بھی کھیلنے کی پیشکش کی مگر وہ جانے کا فیصلہ کرچکے تھے۔

شیخ رشید کا کہنا تھا کہ ہمارے پاس میڈیا کے ذریعے آکس معاہدہ کی خبر آئی ہے، چین ہمارا صدا بہار دوست ہے جو ہر مشکل وقت میں ہمارے ساتھ کھڑا ہوتا ہے۔

انہوں نے کہا کہ افغانستان  کے صورتحال پر چین،روس،ایران اور ازبکستان کے ساتھ رابطے میں ہے وہاں خون ریزی نہ ہونے میں پاکستان کا بڑا رول ہے۔

شیخ رشید کا کہنا تھا کہ ہمارے اداروں کو معلوم تھا کہ نیوزی لینڈ ٹیم کی حفاظت کتنی اہم ہے اسلئے ہم نے ٹاپ کی سیکیورٹی یونٹ کو ان کے حفاظت پر مامور کیا تھا۔

وزیرداخلہ کا کہنا تھا کہ تحقیقات ہمارے اداروں نے کی ہے نیوزی لینڈ نے ہمارے ساتھ کسی قسم کے معلومات شیئر نہیں کی۔

شیخ رشید کا کہنا تھا کہ نیوزی لینڈ ٹیم کے پاکستان سے جانے کے بعد کی ای میلز کو دنیا کے سامنے رکھیں گے اور اس کے بعد فیصلہ دنیا کو کرنا ہے۔

انہوں نے کہا کہ انڈین میڈیا کے پاکستان مخالف مہم کی وجہ وہ ذلت ہے جو افغانستان میں ان کے حصے میں آئی ہے۔

افغانستان کے صورتحال پر تبصرہ کرتے ہوئے شیخ رشید احمد کا کہنا تھا کہ طالبان حکومت کو صرف 21 دن ہوگئے ہے اتنے مختصر وقت میں وہاں معامالات بہتر نہیں ہوسکتے۔

انہوں نے کہا کہ ہم نے افغان امن عمل میں امریکا اور طالبان کو صرف سہولت فراہم کی تھی معاہدہ میں ہمارا کوئی رول نہیں تھا۔

وزیرداخلہ کا کہنا تھا کہ لڑکوں اور لڑکیوں کے اسکولز تو پاکستان میں بھی الگ الگ ہیں صرف یونیورسٹی میں ایک ساتھ پڑھتے ہیں۔

شیخ رشید احمد کا کہنا تھا کہ ہم نے افغانستان سے 10 ہزار لوگوں کو انخلاء میں مدد کی جن میں سے اکثریت کے پاس دستاویزات بھی نہیں تھے۔

انہوں نے کہا کہ جتنے بھی غیرملکی آتے ہیں یہی پوچھتے ہیں کہ آپ نے کوئی مہاجر کیمپ نہیں بنایا تو ہمارا جواب ہوتا ہے کہ ہم تو یہاں پہلے سے موجود مہاجرین کے واپسی کے خواہش مند ہیں۔

وزیرداخلہ کا کہنا تھا کہ افغانستان کے ساتھ ہمارا 3 ہزار کلومیٹر کا بارڈر ہے ہم وہاں کے حالات سے لاتعلق نہیں رہ سکتے۔

انہوں نے کہا کہ کالعدم تحریک طالبان میں 300 سے 500 تک ایسے لوگ ہیں جو پاکستان میں دہشتگردی کے واقعات میں براہ راست ملوث ہیں انہی معافی نہیں ملے گی۔

وزیرداخلہ کا کہنا تھا کہ ٹی ٹی پی کے ان لوگوں کے اداروں کے پاس پورے کوائف موجود ہیں اور جلد ایسے عناصر سے نمٹ لیں گے۔

انہوں نے کہا کہ طالبان دنیا سے رابطوں کےلئے تیار ہیں انہیں اس وقت تنہا چھوڑنا دانش مندی نہیں ہے۔

شیخ رشید احمد کا کہنا تھا کہ عمران خان عزم رکھتے ہیں کہ اگلا الیکشن الیکڑانک ووٹنگ مشین سے ہوگا جس میں اوورسیز پاکستانیوں کو بھی ووٹ کا حق دیا جائے گا۔

انہوں نے کہا کہ وفاقی کابینہ کے عمومی رائے یہی ہے کہ موجودہ چیف الیکشن کمشنر الیکٹرانک ووٹنگ مشین کے راہ میں رکاوٹ ہیں۔

وزیرداخلہ کا کہنا تھا کہ شہبازشریف پر خود نیب کیسز ہے چیئرمین نیب کے تقرری کےلئے ان سے مشورہ نہیں کیا جاسکتا مگر اس بات کا زیادہ امکان ہے کہ موجودہ چیئرمین نیب اپنا کام جاری رکھے۔

انہوں نے کہا کہ فارن فنڈنگ کیس میں تحریک انصاف نے سارے دستاویزات جمع کررکھے ہیں باقی پارٹیوں کے پاس تو رسیدیں تک نہیں ہے۔

وزیرداخلہ کا کہنا تھا کہ تحریک انصاف حکومت کےلئے سب سے بڑا چیلنج مہنگائی ہے، عمران خان کی خوش قسمتی ہے کہ انہیں ایسی نالائق اپوزیشن ملی ہے اسلئے وہ پانچ سال پورے کریں گے۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube