Saturday, September 25, 2021  | 17 Safar, 1443

قائم علی شاہ کو نیب گرفتار کرنے کا ارادہ نہیں رکھتا،پراسیکیوٹر

SAMAA | - Posted: Sep 15, 2021 | Last Updated: 1 week ago
SAMAA |
Posted: Sep 15, 2021 | Last Updated: 1 week ago

سندھ ہائی کورٹ میں نیب پراسیکیوٹرعبید اللہ ابڑو نے تحریری جواب جمع کروایا ہے کہ سابق وزیراعلیٰ سندھ قائم علی شاہ کو گرفتار کرنے کا ارادہ نہیں رکھتے۔

سندھ ہائیکورٹ میں سابق وزیراعلیٰ سید قائم علی شاہ کے خلاف شہداد پور میں زمین کی الاٹمنٹ کے کیس کی سماعت ہوئی۔

نیب پراسیکیوٹر نےعدالت کو بتایا کہ ملزمان کے خلاف ایک ریفرنس دائر ہوچکا ہے اور ضمنی ریفرنس دائر کرنے کے لیے مزید انکوائری جاری ہے۔

عدالت نےنیب پراسیکیوٹر سکھرعبید اللہ ابڑو پر برہمی کا اظہار کیا۔ جسٹس اقبال کلہوڑو نے کہا کہ اگر قائم علی شاہ کی انکوائری میں ضرورت نہیں تو پھر کیس نمٹا دیتے ہیں۔ نیب نے قائم علی شاہ کو گرفتار نہیں کرنا تو پھر سندھ ہائیکورٹ میں کیس چلانے کی ضرورت نہیں، جب حتمی ریفرنس دائر ہوجائے توملزم خود ٹرائل کورٹ میں پیش ہوجائے گا۔

عدالت کو نیب پراسیکیوٹر نے بتایا کہ ریفرنس دائر کرنے کے لیے معاملہ نیب ہیڈ کوارٹر کو ارسال کیا تھا تاہم ہیڈ کوارٹر نے کچھ اعتراضات لگا دیے تھے اس لیے تاخیر ہوئی۔

سندھ ہائی کورٹ میں نیب پراسیکیوٹرعبید اللہ ابڑو نے تحریری جواب جمع کروایا کہ قائم علی شاہ کو گرفتار کرنے کا ارادہ نہیں رکھتے۔

جسٹس اقبال کلہوڑو نے ریمارکس دئیے کہ اگر قائم علی شاہ کی اس کیس کی انکوائری میں ضرورت نہیں تو پھر کیس نمٹا دیتے ہیں۔ عدالت نے قائم علی شاہ کی درخواست ضمانت نمٹاتے ہوئے نیب کا تحریری جواب ریکارڈ کا حصہ بنا لیا۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube