Wednesday, October 27, 2021  | 20 Rabiulawal, 1443

اٹھارہ سال سےکم عمرافرادکی ویکسینیشن ،نئی گائیڈلائنزجاری

SAMAA | - Posted: Sep 1, 2021 | Last Updated: 2 months ago
SAMAA |
Posted: Sep 1, 2021 | Last Updated: 2 months ago

پاکستان کے لیے10 لاکھ اسپوٹنک روسی ویکسین کی کھیپ پہنچ چکی ہے

نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر نے ملک میں 18سال سےکم عمرافراد کی ویکسینیشن کیلئے نئی گائیڈلائنز جاری کردی ہیں۔

این سی او سی کے مطابق کمزور قوت مدافعت والے12سے17سال کے افراد فائرز ویکسین لگوا سکتے ہیں۔ ویکسینیشن کے وقت میڈیکل دستاویز دکھانا ہوں گی اور نادرا کے ریکارڈ ( نمز ) میں رجسٹریشن کیلئے ب فارم نمبر استعمال کیا جائے گا۔ یہ گائیڈ لائنز آج سے نافذ العمل ہونگی۔

این سی او سی کے سربراہ اسد عمر کی جانب سے ٹویٹ کرتے ہوئے بتایا گیا ہے کہ  گزشتہ روزپاکستان میں کرونا ویکسی نیشن کا نیا ریکارڈ قائم ہوا اور1 دن میں15 لاکھ90 ہزار شہریوں نے کروناوائرس سے بچاؤ کی ویکسین لگوائی۔ اسدعمر نے مزید بتایا کہ ویکسین کی پہلی اوردوسری خوراک دونوں ایک دن میں سب سے زیادہ لگائی گئیں۔ گزشتہ روز پہلی خوراک10 لاکھ71 ہزار اور دوسری خوراک5 لاکھ19 ہزار لگائی گئی ہیں۔

اس کےعلاوہ این سی او سی کی جانب سے بتایا گیا ہے کہ 1 دن میں مزید 101  افراد کرونا وائرس کے باعث انتقال کرگئے ہیں۔ مثبت کیسز کی شرح 6.63 فیصد ریکارڈ کی گئی۔

کرونا سے سب سے زیادہ پنجاب میں 39 اموات ریکارڈ کی گئیں۔ سندھ میں 34 اموات ہوئیں۔ خیبرپختونخوا میں 25 اموات ،آزاد کشمیر اور بلوچستان میں 1، 1 مریض کا انتقال ہوا۔ کرونا سے مجموعی اموات کی تعداد 25 ہزار 889 ہوگئی ہے۔

این سی او سی نے یہ بھی بتایا ہے کہ 24 گھنٹوں میں 3 ہزار 559 کیسز رپورٹ ہوئے۔ اس دوران 53 ہزار 637 ٹیسٹ کئے گئے۔کرونا کے فعال کیسزکی تعداد 93 ہزار901 ہوگئی ہے۔ اس وقت 6 ہزار 244 مریض 639 اسپتالوں میں زیر علاج ہیں۔ پشاور میں 50 فیصد، لاہور میں 51 فیصد، ملتان میں 72 فیصد، بہاولپور میں 47 فیصد وینٹیلیٹرز بھرچکے ہیں۔ گجرات میں 71 فیصد، گوجرانوالہ میں 66 فیصد، سوات میں 79 فیصد اور صوابی میں 99 فیصد آکسیجن بیڈز پر مریض موجود ہیں۔

اسد عمر نے ٹویٹ کرتے ہوئے یہ بھی بتایا کہ اگست کے آخر تک 24 بڑے شہروں کے 18 سال سے زائد عمر کے 40 فیصد آبادی کی ویکسینیشن کا ہدف مقرر کیا گیا اور 20 شہروں میں یہ ہدف حاصل کرلیا  گیا تاہم حیدرآباد، مردان، نوشہرہ اور کوئٹہ میں یہ ہدف حاصل نہیں ہوا۔

اسد عمر نے مزید بتایا کہ پاکستان میں 35 فیصد ویکسینیشن کی اہل آبادی کم ازکم پہلی خوراک لگا چکی ہے۔اسلام آباد میں 69 فیصد، آزاد کشمیر میں 51 فیصد ویکسین ڈوزز لگ چکی ہیں۔ گلگت بلتسان میں 39 فیصد، پنجاب میں 37 فیصد، خیبرپختونخوا میں 35 فیصد، سندھ میں 32 فیصد جبکہ بلوچستان میں 12 فیصد خوراکیں لگ چکی ہیں۔

اس کے علاوہ ترجمان این ڈی ایم اے نے بتایا ہے کہ پاکستان کے لیے 10 لاکھ اسپوٹنک روسی ویکسین کی کھیپ پہنچ چکی ہے۔ یہ ویکسین یکم ستمبر کو پاکستان پہنچیں اور وزارت صحت کے حوالے کر دی گئیں۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube