Thursday, January 20, 2022  | 16 Jamadilakhir, 1443

نورمقدم قتل کیس:مرکزی ملزم کاامریکی سفارتخانےسےرابطہ

SAMAA | - Posted: Aug 31, 2021 | Last Updated: 5 months ago
SAMAA |
Posted: Aug 31, 2021 | Last Updated: 5 months ago
Noor Muqadam

فوٹو: ٹوئٹر

نور مقدم قتل کیس کے مرکزی ملزم ظاہر جعفر نے اڈیالہ جیل میں امریکی سفارت خانے کے کونسلر سے بذریعہ ٹیلی فون رابطہ کرلیا۔

وفاقی وزارت داخلہ اور پنجاب حکومت کی منظوری کے بعد اڈیالہ جیل کی ہائی سیکیورٹی بیرک میں بند ظاہر ذاکر جعفر سے امریکی سفارت خانے کےحکام نے ٹیلیفونک رابطہ کیا ہے۔

جیل حکام کے مطابق ملزم ظاہر جعفر نے اڈیالہ جیل میں امریکی کونسلر سے 25 منٹ تک گفتگو کی۔

اس سے قبل نور مقدم قتل کیس میں نامزد مرکزی ملزم ظاہر جعفر کو امریکی شہری ہونے کے باعث قونصلر رسائی دی گئی تھی، وزارتِ داخلہ کے این او سی کے بعد محکمہ داخلہ پنجاب نے منظوری دی تھی۔

نور مقدم کیس: فرانزک رپورٹ میں نئے انکشافات، مزید گرفتاریاں

یاد رہے کہ سابق سفیر کی بیٹی کے قتل میں ملوث ملزم ظاہر جعفر پاکستانی نژاد امریکی شہری ہے، کیس کے ابتداء میں ملزم نے پولیس سے عدم تعادن کرتے ہوئے یہی موقف دہرایا تھا کہ وہ امریکی شہری ہے اور اس پر مقامی قانون کا اطلاق نہیں ہوتا۔

قبل ازیں نور مقدم قتل کیس کی فرانزک رپورٹ میں نئے انکشافات سامنے آئے تھےجس کے بعد تھراپی سینٹر کےمالک سمیت مزید 6 افراد گرفتار کرلیے۔

نورمقدم کا قتل سے پہلے ریپ کیا گیا، فرانزک رپورٹ

نورمقدم قتل کيس کی فرانزک رپورٹ اس بات کا بھی انکشاف ہوا تھا کہ مقتولہ کو قتل سے پہلے بدترین تشدد اور ریپ کا نشانہ بنایا گیا تھا۔ گھر کی سی سی ٹی وی فوٹيج ميں ملزم اور مقتولہ نظر آرہے تھے جبکہ قتل کے ليے استعمال ہونے والے چاقو پربھی ملزم ہی کے فنگر پرنٹس ملےہيں۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube