Wednesday, October 27, 2021  | 20 Rabiulawal, 1443

پیپلزپارٹی کےبعدنون لیگ بھی پارلیمنٹ سے مستعفیٰ ہونےسےکترانےلگی

SAMAA | - Posted: Aug 30, 2021 | Last Updated: 2 months ago
Posted: Aug 30, 2021 | Last Updated: 2 months ago

استعفوں کی تجويز پر ليگی رہنماؤں نے دبےالفاظ ميں اعتراض کیا

پاکستان پيپلزپارٹی کے بعد پاکستان مسلم لیگ نواز بھی پارلیمنٹ سے استعفیٰ دینے سے کترانے لگی ہے۔

سماء کے نمائندہ خصوصی نعیم اشرف بٹ نے بتایا ہے کہ پی ڈی ايم کے اجلاس ميں اسمبليوں سے استعفوں پر نون ليگ نے تحفظات کا اظہار کرديا ہے۔ اس اجلاس ميں سابق وزیراعظم نوازشريف بھی شريک تھے۔

اجلاس میں مولانا فضل الرحمان کی جانب سے استعفوں کی تجويز پر ليگی رہنماؤں نے دبےالفاظ ميں اعتراض کیا۔ نوازشريف نےکہا کہ استعفوں سے پہلے يقينی بنائيں کہ ضمنی انتخاب نہ ہوسکے۔

دیگر لیگی رہنماؤں کا بھی ایسا ہی موقف تھا کہ يہ نہ ہو کہ ہم استعفیٰ دے ديں اور حکومت ضمنی انتخاب کروالے۔اپوزيشن کی آدھی جماعتيں استعفیٰ نہ ديں تو اس کا فائدہ نہيں ہوگا۔

واضح رہے کہ 6 ماہ قبل میں پی ڈی ايم ميٹنگ ميں پاکستان پیپلزپارٹی نے بھی استعفوں پر يہی اعتراض اٹھايا تھا۔ استعفوں کا اعلان نہ ہونے پر پچھلی مرتبہ بھی لانگ مارچ ملتوی کرديا گيا تھا۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube