Saturday, October 23, 2021  | 16 Rabiulawal, 1443

کرونامثبت کیسزمیں اضافےکی وجہ ایس او پیزکی خلاف ورزی ہے،قاسم سومرو

SAMAA | - Posted: Aug 24, 2021 | Last Updated: 2 months ago
SAMAA |
Posted: Aug 24, 2021 | Last Updated: 2 months ago

وائرس کےمثبت کیسزکی شرح 10 سے12 فیصد کےدرمیان ہے

سندھ کے پارلیمانی سیکریٹری صحت قاسم سومرو نے صوبے میں کرونا کے مثبت کیسز میں اضافے کی وجہ ایس او پیز کی خلاف ورزی کو قرار دیا ہے۔

منگل کو سماء کے پروگرام نیا دن میں بات کرتے ہوئے سندھ کے پارلیمانی سیکریٹری برائے صحت قاسم سومرو نے بتایا کہ سندھ میں کرونا وائرس کے مثبت کیسز کی شرح 10 سے 12 فیصد کے درمیان ہے۔ اس شرح میں اضافہ کرونا وائرس سے بچاؤ کی ایس او پیز کی خلاف ورزی کی وجہ سے ہوا ہے۔ انھوں نے بتایا کہ کرونا سے اموات کی وجہ ٹیسٹ نہ کروانا بھی ہے۔ سندھ میں صورتحال خراب ہے اور عوام ویکسین کی جانب زیادہ توجہ نہیں دے رہے۔

قاسم سومرو نے بتایا کہ کراچی میں اب تک 41 فیصد افراد نے ویکسینیشن کروالی ہے۔ ضلع جنوبی اور شرقی میں 70 سے 80 فیصد تک افراد نے کم از کم ویکسین کی پہلی خوراک لگوالی ہیں۔ ضلع تھرپارکر میں 35 فیصد افراد کی ویکسینیشن ہوچکی ہے۔ حیدرآباد میں 28فیصد، نواب شاہ میں 27 فیصد، سکھر اور لاڑکانہ میں ویکسینیشن کروانے والے افراد کی تعداد کم ہے۔

قاسم سومرو نے بتایا کہ حاملہ خواتین کے لیے سنگل ڈوز ویکسین کے علاوہ دیگر تمام ویکسین محفوظ ہیں۔ بچوں کو دودھ پلانے والی خواتین بھی ویکسین لگواسکتی ہیں۔

واضح رہے کہ وزارت صحت نے گذشتہ روز بتایا تھا کہ حاملہ خواتین موڈرنا، سائنوفارم، سائنو ویک، کینسائینو ویکسین لگوا سکتی ہیں۔ حاملہ خواتین ڈاکٹرز کے مشورے سے یہ ویکسین لگوائیں اورڈاکٹرز مریضہ کی حالت دیکھ کر فیصلہ کریں اور سب کو منع نہیں کریں۔

منگل کو این سی او سی نے بتایا کہ 24 گھنٹوں میں 4 ہزار 75 نئے کرونا کیسز رپورٹ ہوئے۔ ملک میں کرونا کےمثبت کیسز کی شرح 6.79 فیصد ریکارڈ کی گئی۔کرونا کے باعث سب سے زیادہ پنجاب میں 48، خیبرپختونخوا میں 22 اموات ہوئیں۔ سندھ میں 15،بلوچستان میں 1 اورآزاد کشمیر 5 مریضوں کا انتقال ہوا۔کرونا سے مجموعی اموات کی تعداد 25 ہزار94 ہوگئی ہے۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube