Saturday, October 23, 2021  | 16 Rabiulawal, 1443

انیسویں صدی کاسفری شفاخانہ اصل حالت میں بحال

SAMAA | - Posted: Aug 18, 2021 | Last Updated: 2 months ago
SAMAA |
Posted: Aug 18, 2021 | Last Updated: 2 months ago

خیبر پختونخوا محکمہ سیاحت و آرکیالوجی نے عجائب گھر کو اپنی اصل حالت میں بحال کرنے کے بعد 19ویں صدی میں بطور ایمبولینس استعمال ہونے والی برطانوی ڈوچ کمپنی کی گاڑی کو بھی اصل حالت میں بحال کردیا۔

برطانوی ڈوچ کمپنی کی گاڑی کو 1943 سے 1950 تک بطور سفری شفاخانہ یعنی ایمبولینس کے طور پر استعمال کیا جاتا تھا وقت اور حالات نے ناکارہ بنادیا تو محکمہ آرکیالوجی نے اسے اپنی اصل حالت میں واپس بحال کرنے کا بیڑا اٹھایا۔

گاڑی کو پشاور سے ایبٹ آباد لے جاکر 8 ماہ میں اصل حالت میں بحال کردیا گیا ایمبولینس میں استعمال ہونے والےانجن پلگز اور آئل فلٹر بیرون ممالک سے منگوائے گئے ہیں۔

ڈائریکٹر آثار قدیمہ ڈاکٹر عبد الصمد کے مطابق ایمبیولینس کو سیاحت کے فروغ کےلئے استعمال کیا جائے گا ایک صدی پرانے اس سفری شفاخانے کی بحالی پر 15 لاکھ خرچ ہوئے۔

محکمہ آرکیالوجی کے مطابق اس ایمبولینس کو مختلف اسکولوں میں لے جایا جائے گا تاکہ طلبہ کواسکی اہمیت سے آگاہ کیا جاسکے۔

واضح رہے کہ سفری شفاخانے پر 08 ماہ کا عرصہ لگا جبکہ 15 لاکھ روپے خرچ ہوئے۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube