Saturday, September 25, 2021  | 17 Safar, 1443

آزادکشمیرکی انتخابی مہم،پاکستان مسلم لیگ نون کےبیانیےمیں اختلافات

SAMAA | - Posted: Jul 15, 2021 | Last Updated: 2 months ago
Posted: Jul 15, 2021 | Last Updated: 2 months ago

شہبازشریف مزاحمتی سخت موقف کا حصہ نہیں بننا چاہتے

آزاد کشمیر کی انتخابی مہم میں پاکستان مسلم لیگ نون کے بیانیے میں اختلافات سامنے آئے ہیں۔

سماء کی نمائندہ خصوصی نعیم اشرف بٹ نے بتایا ہے کہ پاکستان مسلم لیگ نون کے صدر شہبازشریف مزاحمتی سخت موقف کا حصہ نہیں بننا چاہتے ہیں اور مفاہمتی بیانیے پر ڈٹے ہوئے ہیں۔شہبازشریف سمجھتے ہیں کہ مریم نواز،پرویز رشید،شاہد خاقان عباسی جس بیانیے کو لے کر چل رہے ہیں وہ پارٹی کے لیے نقصان دہ ہے۔ اس ہی وجہ سے اہم انتخابی مہم سے شہبازشریف دور ہیں اور شہبازشریف نے انتخابی مہم سے متعلق کوئی ٹویٹ بھی نہیں کیا ہے۔

شہبازشریف کے ہم خیال رہنما خواجہ سعد رفیق،خواجہ آصف، ایازصادق، رانا تنویر،خرم دستگیر کی جانب سے بھی آزاد کشمیر انتخابی مہم کے حوالےسے کوئی بیان جاری نہیں کیا گیا ہے۔ آزاد کشمیر کی انتخابی مہم میں مزاحمتی موقف اختیار رکھنے والی لیگی رہنما موجود ہیں۔

آزاد کشمیر میں مسلم لیگ نون کی قیادت نے بھی شہبازشریف کو کئی مرتبہ انتخابی مہم کے سلسلے میں دعوت دی ہے۔ پارٹی کی خلیج ختم کرنے کےلیے شہبازشریف 17 یا 18 جولائی کو آزاد کشمیر میں جلسے میں شرکت کرسکتے ہیں۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube