Monday, September 27, 2021  | 19 Safar, 1443

کیا پاکستان میں کلاؤڈ برسٹ کا واقعہ ہوا ہے؟

SAMAA | - Posted: Jul 13, 2021 | Last Updated: 3 months ago
SAMAA |
Posted: Jul 13, 2021 | Last Updated: 3 months ago

فائل فوٹو

محکمہ موسمیات کا کلاؤ برسٹ کی خبروں سے متعلق کہنا ہے کہ پاکستان میں کلاؤ برسٹ کا کوئی واقعہ پیش نہیں آیا ہے، کچھ نیوز چینلز پر چلنے والی خبریں بے بنیاد ہیں۔

ترجمان محکمہ موسمیات کا کہنا تھا کہ پورے ملک میں مون سون کی بارشیں معمول کے مطابق ہو رہی ہیں۔ کلاؤڈ برسٹ سے متعلق خبریں درست نہیں۔ مون سون کے زیر اثر علاقوں میں کہیں ہلکی اور کہیں تیز بارش ہو رہی ہے۔

بعض بالائی علاقوں میں موسلا دھار بارش بھی جاری ہے ، جب کہ ان بارشوں سے کوئی کلاؤڈ برسٹ نہیں ہوا۔ یہ بارشیں معمول کا حصہ ہیں۔

لاؤڈ برسٹ کیا ہوتا ہے؟

کلاؤڈ برسٹ یا بادل پھٹنے کا مطلب کسی مخصوص علاقے میں اچانک بہت کم وقت میں گرج چمک کے ساتھ بہت زیادہ اور موسلادھار بارش کا ہونا ہے جس کے باعث سیلابی صورت حال پیدا ہو جائے۔

بادل پھٹنے کا واقعہ اس وقت پیش آتا ہے جب زمین یا فضا میں موجود بادلوں کے نیچے سے گرم ہوا کی لہر اوپر کی جانب اٹھتی ہے اور بادل میں موجود بارش کے قطروں کو ساتھ لے جاتی ہے۔

اس وجہ سے عام طریقے سے بارش نہیں ہوتی اور نتیجے میں بادلوں میں بخارات کے پانی بننے کا عمل بہت تیز ہو جاتا ہے کیونکہ بارش کے نئے قطرے بنتے ہیں اور پرانے قطرے اپ ڈرافٹ کی وجہ سے واپس بادلوں میں دھکیل دیے جاتے ہیں، جس کا نتیجہ طوفانی بارش کی شکل میں نکلتا ہے کیونکہ بادل اتنے پانی کا بوجھ برداشت نہیں کرپاتے۔

کلاؤڈ برسٹ کے واقعات ماضی میں پاکستان اور انڈیا اور اس کے زیرِ انتظام کشمیر کے پہاڑی علاقوں میں پیش آتے رہے ہیں جہاں کم اونچائی والے مون سون بادل اونچے پہاڑوں سے ٹکرا کر رک جاتے ہیں اور برس پڑتے ہیں۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube