Wednesday, July 28, 2021  | 17 Zilhaj, 1442

پشتونخوا ملی عوامی پارٹی کےرہنماء عثمان کاکڑ انتقال کرگئے

SAMAA | - Posted: Jun 21, 2021 | Last Updated: 1 month ago
SAMAA |
Posted: Jun 21, 2021 | Last Updated: 1 month ago

فوٹو: قومی اسمبلی

پشتونخوا ملی عوامی پارٹی کے صوبائی صدر عثمان خان کاکڑ انتقال کرگئے۔

سیکرٹری اطلاعات پی کے میپ رضا محمد نے عثمان کاکڑ کےانتقال کی تصدیق کرتے ہوئے بتایا کہ عثمان کاکڑ برین ہیمبرج کےباعث کراچی کے نجی اسپتال میں زیرعلاج تھے۔

اس سے قبل 18 جون کو عثمان کاکڑ کو برین ہیمبرج ہوا تھا جس کے باعث وہ گِر کرزخمی ہوگئے تھے، انہیں سر پر چوٹ آئی تھیں جس کے بعد انہیں کوئٹہ کے علاقے پشین اسٹاپ میں واقع نجی اسپتال اور پھر کوئٹہ کے معروف نیورو سرجن ڈاکٹر نقیب اللہ کے کلینک لے جایا گیا تھا۔

بلوچستان کے ضلع قلعہ سیف اللہ سے تعلق رکھنے والے عثمان خان کاکڑ پشتونخواملی عوامی پارٹی کے مرکزی سیکریٹری اور صوبائی صدر تھے۔ انہوں نے عملی سیاست کا آغاز تین دہائیاں قبل پشتونخوا میپ میں شمولیت لی اور آخری لمحے تک پارٹی سے وابستہ رہے۔

محمود خان اچکزئی کے بعد عثمان کاکڑ پشتونخوا میپ کے سب سے مقبول رہنما مانے جاتے تھے۔

عثمان کاکڑ نے 1987 میں کوئٹہ کے لاء کالج سے وکالت کی ڈگری حاصل کی۔ زمانہ طالب علمی میں بھی وہ پشتونخوا میپ کی طلبہ تنظیم پشتونخوا سٹوڈنٹس آرگنائزیشن سے وابستہ رہے۔

عثمان کاکڑ 2015 سے مارچ 2021 تک سینیٹ آف پاکستان کے رکن  رہے۔ 2018 میں مسلم لیگ ن اور دیگر جماعتوں کے اتحاد سے سینیٹ کے ڈپٹی چیئرمین کے عہدے کا الیکشن لڑا تاہم کامیاب نہ ہوئے۔

پشتون تحفظ موومنٹ کے حامی عثمان کاکڑ کو سینیٹ میں ملٹری اسٹیبشلمنٹ کے سخت ناقد کے طور پر شہرت ملی۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے :

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube