Saturday, October 16, 2021  | 9 Rabiulawal, 1443

افغانستان کےاندرونی معاملات میں مداخلت کاالزام بےبنیادہے،پاکستان

SAMAA | - Posted: Jun 18, 2021 | Last Updated: 4 months ago
Posted: Jun 18, 2021 | Last Updated: 4 months ago
Foreign Office

فوٹو: ریڈیو پاکستان

افغان مشیر قومی سلامتی کے بیان کی سختی سے تردید کرتے ہوئے پاکستان کا کہنا ہے کہ افغانستان کے اندرونی معاملات میں بےجا مداخلت کے الزامات قابل مذمت ہیں۔

ترجمان دفتر خارجہ زاہد چوہدری کی جانب سے جاری بیان کے مطابق افغان مشیر قومی سلامتی کا پاکستان مخالف بے بنیاد ہے، جس کی شدید مذمت کرتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ افغان امن عمل میں پاکستان کے کردار کو عالمی سطح پر سراہا گیا ہے۔ منصوبہ بندی کے تحت پاکستان پر الزامات امن عمل کو خراب کرنے کی کوشش ہے۔

افغان مشیر کا ذکر کرتے ہوئے ترجمان کا کہنا تھا کہ افغان مشیر کویاد دہائی کرانا چاہتا ہوں کہ دونوں ممالک کے درمیان اے پییس فورم موجود ہے۔ فورم میں یہ طے کیا گیا تھا کہ کسی قسم کی الزام تراشی سے گریز کیا جائے گا۔

دوسری جانب ترکی کے دورے پر موجود پاکستانی وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے افغان مفاہمتی کونسل کے چیئرمین عبداللہ عبداللہ سے ملاقات کی۔ ملاقات میں دونوں رہنماؤں کے مابین دو طرفہ تعلقات، افغان امن عمل سمیت دیگر باہمی دلچسپی کے امور پر تبادلہ خیال کیا گیا۔

ملاقات میں شاہ محمود قریشی کا کہنا تھا کہ بلاتخصیص تمام افغان قیادت کے ساتھ روابط کے متمنی ہیں۔ پاکستان کی کوششوں سے امریکا طالبان اور بین الافغان مذاکرات میں کامیابی ہوئی۔ افغان قیادت جامع مذاکرات کے ذریعے مسئلے کا سیاسی حل تلاش کریں۔

انہوں نے یہ بھی کہا کہ امن مخالف عناصر کی پسپائی کیلئے مذاکرات کا نتیجہ خیز ہونا ناگزیر ہے۔ منفی بیانات امن مخالف قوتوں کی حوصلہ افزائی کا باعث بنتے ہیں۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube