Thursday, September 23, 2021  | 15 Safar, 1443

اپوزیشن اوراسپیکر اسمبلی کے بیچ معاملات طے ہوگئے، اعظم نذیر

SAMAA | - Posted: Jun 17, 2021 | Last Updated: 3 months ago
SAMAA |
Posted: Jun 17, 2021 | Last Updated: 3 months ago

رہنما مسلم لیگ ن اعظم نذیر تارڑ کا کہنا ہے کہ آج قومی اسمبلی اجلاس سے قبل اسپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر اور تمام اپوزیشن رہنماؤں کے درمیان مثبت رابطے ہوئے ہیں جس کے بعد معاملہ اسپیکر کے خلاف تحریک عدم اعتماد لائے جانے کا امکان نہیں۔

سماء کے پروگرام 7 سے 8 میں گفتگو کرتے ہوئے اعظم تارڑ کا کہنا تھا کہ گزشتہ 3 دن سے جو قومی اسمبلی میں ہوا اس کی تاریخ میں مثال نہیں ملتی۔

اعظم تارڑ کا کہنا تھا کہ دنیا بھر میں اپوزیشن اراکین اسمبلی اجلاسوں میں احتجاج کرتی ہے مگر یہ ایک انوکھا واقعہ تھا جب حکومتی اراکین نے اپوزیشن پر یلغار کی۔

انہوں نے کہا کہ آج اسپیکر اسد قیصر کی شہباز شریف سمیت تمام اپوزیشن رہنماؤں سے بات ہوئی ہے جس سے مثبت اشارے ملے ہیں اور حکومت نے بھی یہ عندیہ دیا ہے کہ جو ہوا وہ غلط تھا۔

اعظم تارڑ کا کہنا تھا کہ آج کی پیش رفت کے بعد اسمبلی کارروائی بھی ٹھیک طرح سے چلنی دی گئی اور جو طوفان آیا تھا اس میں ٹہراؤ آیا ہے جس سے اب معاملہ عدم اعتماد تک نہیں جائے گا۔

رہنما ن لیگ کا کہنا تھا کہ اگر وزیراعظم سنجیدہ ہوتے تو معاملات یہاں تک نہ پہنچتے تاہم ان کا کہنا تھا کہ حکومتی بینچز کو غلطی کا احساس ضرور ہوا ہے۔

اعظم تارڑ کا کہنا تھا کہ سارے معاملے میں حکومت کوفائدہ نہیں ہوا بلکہ حکومت کو حزیمت کا سامنا کرنا پڑا۔

انہوں نے کہا کہ آج یہ بھی طے ہوا ہے کہ بلاول بھٹو بھی کل خطاب کریں گے اور اس میں بھی شور شرابہ نہیں کیا جائےگا۔

شیخ روحیل اصغر کے بیان پر تبصرہ کرتے ہوئے اعظم تارڑ کا کہنا تھا کہ یہ ان کی ذاتی سوچ ہوسکتی ہے مگر گالیاں ایوان کا کلچر نہیں ہوسکتا۔

انہوں نے کہا کہ حکومتی اراکین کی جانب سے جس قسم کی زبان استمعال کی گئی اس پر ہر کسی کا خود پر قابو رکھنا ممکن نہیں ہوتا تاہم اس قسم کے معامالت پر پارٹی کے اندر ضرور بات ہوتی ہے۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube