Wednesday, October 27, 2021  | 20 Rabiulawal, 1443

حکومت ایف بی آر کو بھی نیب بنارہی ہیں،مفتاح اسماعیل

SAMAA | - Posted: Jun 14, 2021 | Last Updated: 4 months ago
Posted: Jun 14, 2021 | Last Updated: 4 months ago

مسلم لیگ ن کے رہنما مفتاح اسماعیل کا کہنا ہے حکومت ایف بی آر کو گرفتاریوں کا اختیار دے کر دوسرا نیب بنانا چاہتی ہے۔

سماء کے پروگرام ندیم ملک لائیو میں گفتگو کرتے ہوئے مفتاح اسماعیل کا کہنا تھا کہ تحریک انصاف کی روایت ہے کہ یہ اپنے ٹارگٹ پورے نہیں کرتی، یہ تین سال سے اپنا ٹیکس ہدف بھی حاصل نہیں کرسکی۔
مفتاح اسماعیل کا کہنا تھا کہ بجٹ میں ڈبے کے دودھ، چینی اور سائیکل پر ٹکس لگایا گیا ہے جو غریبوں کے استعمال کی چیزیں ہیں۔
رہنما ن لیگ کا کہنا تھا کہ بجٹ میں ودہولڈنگ ٹیکس حتم کرنا اور ٹیکس سے متعلق معاملات کی آڈٹ تھرڈ پارٹی سے کروانے کے اقدامات اچھی پیش رفت ہے۔
مفتاح اسماعیل کا کہنا تھا کہ ایف بی آر کے پاس ریفنڈ کی مد میں لوگوں کے 7 کھرب روپے پڑے ہیں لیکن وہ رقم واپس نہیں دی جارہی۔
انہوں نے کہا کہ ہمارے دور میں انڈائریکٹ ٹیکس 45 فیصد تھا جو کہ آج 55 فیصد ہوچکا ہے۔
مفتاح اسماعیل کا کہنا تھا کہ حکومت نے میڈیکل الاؤنس پر بھی ٹیکس لگادیا ہے جو اس مہنگائی کے دور میں ایک اور زیادتی ہے۔
انہوں نے کہا کہ بجٹ میں اراکین قومی اسمبلی کو دینے کے لیے 66 ارب روپے رکھے گئے جن کے بارے میں عمران خان ماضی میں کہتے تھے کہ کرپشن کا آغاز اسی مد سے ہوتا ہے۔
پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے وزیراعظم کے معاون خصوصی ڈاکٹر وقار مسعود کا کہنا تھا کہ مفتاح اسماعیل نے کچھ حکومتی اقدامات کی تعریف کی ہے جس پر وہ ان کے مشکور ہیں۔
ڈاکٹر وقار مسعود کا کہنا تھا کہ بجٹ میں کوئی نیا ٹیکس نہیں لگایا جارہا لیکن اگر کسی کو ٹیکس سے کوئی استثناء حاصل تھا تو ہم نے وہ ختم کردیا۔
انہوں نے کہا کہ پرویڈنٹ فنڈ پر براہ راست کوئی ٹیکس نہیں لگا تاہم اس کی آمدنی پر ٹیکس لگایا جارہا ہے۔
ڈاکٹر وقار مسعود کا کہنا ہے کہ سارے الاؤنس ٹیکس ایبل ہے اور ٹیکس پوری آمدنی کو دیکھ کر لگتا ہے یہ کوئی زیادہ رقم نہیں ہوتا۔
معاون خصوصی کا کہنا تھا کہ سائیکل پر کوئی ٹیکس نہیں لگا اور گندم پر ٹیکس میرے علم میں نہیں ہے۔
انہوں نے کہا کہ اخراجات میں ہمیں 3 اعشاریہ 8 فیصد پرائمری خسارہ ملا تھا جسے اس بجٹ میں صفر اعشاریہ 6 فیصد پر لانا ہمارا ہدف ہے تاہم ہوسکتا ہے کہ یہ سرپلس میں چلا جائے۔
وقارمسعود کا کہنا تھا کہ ہم ٹیکس کے معاملات کا تھرڈ پارٹی آڈٹ کرائیں گے۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ ٹیکس کمشنر کے پاس کسی کے بھی خلاف انکوائری کا اختیار تھا جو ہم نے حتم کردیا ہے۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube