کراچی: پویلین اینڈ کلب کو 2روز میں گرانے کا حکم

SAMAA | - Posted: Jun 14, 2021 | Last Updated: 1 month ago
SAMAA |
Posted: Jun 14, 2021 | Last Updated: 1 month ago

سپریم کورٹ نے کراچی میں الہ دین پارک سے متصل پویلین اینڈ کلب اور پارک کے شاپنگ سینٹر کو 2 روز میں گرانے کا حکم دے دیا۔

پیر 14جون کو سپریم کورٹ کراچی رجسٹری میں تجاوزات سے متعلق کیسز کی سماعت ہوئی، جس میں چیف جسٹس گلزار احمد نے الہ دین پارک سے متصل پویلین اینڈ کلب کو غیر قانونی قرار دیا۔

عدالت نے ریمارکس دیے کہ غیر قانونی طور پر زمین کو کنورٹ کرکے کمرشل کردیا گیا، لہٰذا پولیس اور رینجرز کی مدد سے فوری کارروائی کی جائے۔

سپریم کورٹ نے راشد منہاس روڈ پر یو بی ایل کمپلیکس سے متصل زمین بھی خالی کرانے کا حکم دیا۔

سپریم کورٹ کراچی رجسٹری کاشہرکےنالوں پرتجاوزات آپریشن جاری رکھنےکا حکم

سپريم کورٹ کراچی رجسٹری نے کشمیر روڈ سے تمام تجاوزات کو ختم کرنے کا بھی حکم دے ديا جبکہ کے ڈی اے کلب، اسکواش کورٹ، سوئمنگ پول و دیگر تعمیرات بھی گرانے کا حکم دیا۔

کشمیر روڑ پر کے ڈی اے افسر و دیگر تعمیرات سے متعلق کيس کی سماعت کے دوران چیف جسٹس نے کے ڈی اے کو حکم دیا کہ جتنی مشینیں چاہیں لے کر جائیں اور سب گرائیں۔

عدالت نے کشمیر روڑ پر تمام کھیل کے میدان بحال کرنے کا حکم بھی دے دیا۔

اس سے قبل سپریم کورٹ نے متاثرین کی درخواست مسترد کرتے ہوئے نالوں پر تجاوزات آپریشن جاری رکھنے کا حکم دیا۔ ریمارکس دیے کہ غیرقانونی لیز کی بنیاد پر آپریشن نہیں روک سکتے۔

WhatsApp FaceBook

4 Comments

  1. ناصر خان  June 14, 2021 4:17 pm/ Reply

    برائے مہربانی اس حکم پر عملدرآمد کروایا جائے جس میں چیف جسٹس ص صاحب نے متاثرین فلیٹ کو انکی رقم لوٹانے کا حکم دیا تھا

  2. sana  June 14, 2021 6:14 pm/ Reply

    Ye chief justice shahab kiya chahte sb khud khushi kr k mar jaye .. kis mushkil se flat k liye raqam jori royal park woh b pori demolish ka huqum dai diya .. lekin fori recovery nahi kr wa sake. Ab ye pec ko torna .. sb loog maqrooz hojai aur road par ajaye ye chahte hai chief justice .. pora karachi tor rakhdiya .. logo hi halal kamai zaya kr wa di. ALAH HISAAB LEGA.

  3. طارق  June 14, 2021 8:10 pm/ Reply

    کسی کے غلط کام کی سزا کسی اور کو نہیں دینی چاہئے بلکہ مفاہمت کا درمیانہ راستہ نکالا جائے ۔ جائیں اور جاکر گرائیں۔ تو جو بھی خرچ ھوا ھے اس کو کیوں تباہ کریں ۔ بلکہ اس کو قبضہ میں لیا جاے جیسے کمپنیاں بینک کرپٹ ھوتی ھیں تو ایڈمنسٹریٹر وکیل اس کو حل نکالتے ھیں۔ پلیز دنیا میں انتشار نہ پھیلائیں۔

  4. سید اظہر رفیق۔ اسکاٹ لینڈ  June 15, 2021 1:03 pm/ Reply

    بالکل درست اقدام ہے یہ سپریم کورٹ کا۔

آپ کے تبصرے :

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube