Thursday, October 28, 2021  | 21 Rabiulawal, 1443

پنجاب کا بجٹ 2021-22 آج پیش کیا جائے گا

SAMAA | - Posted: Jun 14, 2021 | Last Updated: 5 months ago
SAMAA |
Posted: Jun 14, 2021 | Last Updated: 5 months ago
punjab_assembly_online

فوٹو: آن لائن

پنجاب میں تحريک انصاف کی حکومت آج اپنا تیسرا بجٹ پیش کرے گی جس کا حجم تقریباً 2ہزار 600ارب روپے ہوگا۔

 بجٹ ميں سماجی شعبے کے لیے سب سے زیادہ 37فیصد رقم مختص کی گئی ہے۔ جنوبی پنجاب کے لیے 35فیصد اور انفراسٹرکچر ڈویلپمنٹ پر 26فیصد رقم خرچ ہوگی۔

صوبائی ملازمین کی تنخواہوں اور پینشن میں 10فیصد اضافے کی تجویز ہے۔ وفاق سے ایک ہزار 690ارب روپے ملیں گے جبکہ ترقیاتی بجٹ کا حجم 560 ارب روپے کا ہوگا۔

کرونا ریلیف پیکج اگلے سال بھی جاری رکھنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔

وزیر خزانہ پنجاب ہاشم جواں بخت کہتے ہیں کہ وفاقی بجٹ کی طرح پنجاب کے بجٹ کا ہدف بھی معیشت کی شرح نمو کو بڑھانا ہے۔

وزیر خزانہ پنجاب کے مطابق پنجاب حکومت نے اگلے سال میں صوبائی ذرائع سے آمدنی کا تخمینہ 360 ارب روپے لگایا ہے جس میں 260ارب روپے ٹیکسوں کے ذریعے آئیں گے تاہم کوئی نیا ٹیکس نہیں لگایا جائے گا۔

چیرمین پنجاب ریونیو اتھارٹی زین العابدین ساہی کے مطابق اس سال پنجاب کا بجٹ صوبائی اسمبلی کی نئی عمارت میں پیش کیا جائے گا جس کی تعمیر پر 5ارب روپے سے زائد لاگت آئی ہے۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube