Thursday, August 5, 2021  | 25 Zilhaj, 1442

سعدرفیق کیخلاف نئی انکوائری کی منظوری

SAMAA | - Posted: Jun 5, 2021 | Last Updated: 2 months ago
SAMAA |
Posted: Jun 5, 2021 | Last Updated: 2 months ago

چئیرمین نیب نے کہا ہے کہ بڑی مچھلیوں کے خلاف وائٹ کالر مقدمات کو منطقی انجام تک پہنچانا اولین ترجیح ہے اور اس سلسلے میں نیب احتساب سب کے لئے کی پالیسی پر قانون کے مطابق عمل پیرا ہے۔

نیب ایگزیکٹو بورڈ کے اجلاس میں پاکستان مسلم لیگ نون کے رہنما خواجہ سعد رفیق ایک اور کیس میں نیب کے ریڈار پر آگئے ہیں۔ سعد رفیق کیخلاف بطور سابق وزیر ریلوے نئی انکوائری کی منظوری دے دی گئی ہے۔نیب اعلامیہ کےمطابق سعد رفیق اور ریلوے افسران کیخلاف بے ضابطگیوں کی انکوائری ہوگی۔

چئیرمین نیب نے مجموعی طور پر کرپشن کیخلاف 10نئی انکوائریوں کی منظوری دے دی ہے۔ سابق ڈی جی اینٹی کرپشن پنجاب مظفرعلی رانجھا کیخلاف بھی انکوائری منظور کی گئی ہے۔ سابق ڈی سی او فیصل آباد نورالامین مینگل ، سابق رکن اسمبلی چوہدری شیر علی کیخلاف بھی انکوائری منظور کی گئی ہے۔ہائی ویز ڈیپارٹمنٹ فیصل آباد کے افسران، سابق ڈپٹی کمشنر فیصل آباد محمد امین چوہدری کیخلاف بھی انکوائری ہوگی۔

اس کےعلاوہ احتساب بیورو کے ایگزیکٹو بورڈ کے اجلاس میں منشاء گروپ کے خلاف انوسٹی گیشن کی منظوری دی گئی ہے۔

اعلامیہ میں بتایا گیا ہے کہ رکن صوبائی اسمبلی پنجاب سہیل ظفر ، سابق ٹاؤن ناظم گوجرانوالہ رضوان ظفر کیخلاف انکوائری عدم شواہد پر بند کردی گئی ہے۔

چئیرمین نیب نے واضح کیا کہ  نیب اور کرپشن ساتھ ساتھ نہیں چل سکتے۔ نیب شوگر، آٹا، منی لانڈرنگ، جعلی اکاؤنٹس کیسز کو منطقی انجام تک پہنچائے گا اورعوام کی لوٹی گئی رقوم کی واپسی کیلئے سنجیدہ کاوشیں کررہے ہیں۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے :

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube