پیپلزپارٹی کےلیےپی ڈی ایم کےدروازے کھلےہیں،مولانافضل الرحمان

SAMAA | - Posted: Jun 3, 2021 | Last Updated: 2 months ago
SAMAA |
Posted: Jun 3, 2021 | Last Updated: 2 months ago

پی ڈی ایم عوام کی آواز بن چکی تھی

اپوزیشن اتحاد پی ڈی ایم کے سربراہ مولانا فضل الرحمان نے کہا ہے کہ پاکستان پیپلزپارٹی اگر واپس آنا چاہتی ہے تو اس کے لئے پی ڈی ایم کے دروازے کھلے ہیں۔

جمعرات کو ملتان میں مولانا فضل الرحمٰن نے جامعہ قاسم العلوم میں میڈیا سے بات کرتے ہوئے بتایا کہ پی ڈی ایم عوام کی آواز بن چکی  تھی۔ اس ناکام حکومت کے خلاف قوم ایک ہوگئی تھی۔ اس وقت حکومت اپنے مقاصد کیلئے قانون لارہی ہے۔

پی ڈی ایم کے سربراہ  نے پیپلز پارٹی کو پیش کش کی ہے کہ اگر پیپلزپارٹی سوچتی ہے کہ ان کے غلط فیصلوں سے جمہوریت کو نقصان پہنچا ہے تو ان کے لئے پی ڈی ایم کے دروازے بند نہیں کئے ہیں۔سیاسی جماعتیں پی ڈی ایم سے ہٹ کر عوامی طاقت کو ضائع کر رہی ہیں کیوں کہ ان کے ناجائز حکومت کے ساتھ مفادات جڑ گئے ہیں۔ان کی جانب سے پی ڈی ایم کو نشانہ بنانا ہمارے لئے تکلیف دہ بات ہے۔

انہوں نے کہا کہ حکومت پانچ دن میں گرے یا پانچ سال میں،تاریخ کے صفحہ پر ہر کسی کا کردار واضح لکھا ہوگا۔ نون لیگ سے متعلق انھوں نے کہا کہ مریم نواز اور شہبازشریف کا تعلق ایک ہی پارٹی سے ہے تاہم ہمارے معاملات پارٹی سے ہيں اور کسی ايک فرد سے نہيں۔

مولانا فضل الرحمان کا مزید کہنا تھا کہ اگر اجتماعی طور پر سب مل کر استعفیٰ نہیں دیتے تو حکومت اپنی مدت طویل کرتی جائے گی۔

بجٹ سے متعلق مولانا فضل الرحمان نے بتایا کہ حکومت ایک ہدف عوام کو دے گی اور تین سے چار ارب روپے جی ڈی پی گروتھ کا بتائے گی تاہم یہ جھوٹ ہوگا۔

انھوں نے مزید کہا کہ سابق صدر پرویز مشرف نے پاکستان کو امریکا کی کالونی بنایا۔ عمران خان کی حکومت بھی اس نقش قدم پر چل رہی ہے۔اگر عمران خان پاکستان کے خلاف استعمال ہونے کےلیے فوجی اڈے امریکا کو دیں گےتو اس کے نتائج کیا ہونگے۔ خطے میں پاکستان غلام کالونی کا کردار ادا کررہا ہے۔موجودہ حکومت بھی آمریت کے سائے میں امریکی مفاد کے لئے کام کر رہی ہے ۔ 2001 میں ہونے والے امریکہ سے معاہدے ملک کے مفاد میں نہیں تھے اور نہ آج ہیں۔ ہمیں کسی وزیر کی بات پر اعتماد نہیں ہے۔ پینٹاگون نے واضح کہا ہے کہ پاکستان میں اڈے استعمال کریں گے، حکومت غلط بیانی کر رہی ہے۔

WhatsApp FaceBook
PDM

آپ کے تبصرے :

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube