Thursday, August 5, 2021  | 25 Zilhaj, 1442

پاکستان کو ویکسین پاک ویک کی تیاری میں 1 ماہ لگا

SAMAA | - Posted: Jun 3, 2021 | Last Updated: 2 months ago
SAMAA |
Posted: Jun 3, 2021 | Last Updated: 2 months ago

خصوصی طيارے میں چينی ويکسين کین سائنو کا خام مال اسلام آباد لایا گیا

پاکستان بھی کرونا وائرس سے بچاؤ کی ويکسين تيار کرنے والے ممالک کی صف ميں شامل ہوگيا ہے۔

پاکستان میں کرونا وائرس ویکسین تیار کرنے کے کام کا آغاز مئی کے پہلے ہفتے میں شروع ہوا اور جون کے پہلے ہفتے میں ویکسین تیار کرلی گئی ہے۔4 اور 5 مئی کی درمیانی شب خصوصی طيارے میں چينی ويکسين کین سائنو کا خام مال اسلام آباد لایا گیا۔ اس سے قبل ہی ویکیسن کے محلول کو محفوظ کرنے کيلئے اس عمارت میں جدید ترین پلانٹ پہلے ہی نصب ہو چکا تھا۔7 مئی کو سربراہ این سی او سی اسد عمر نے ٹوئٹر پیغام میں بتایا کہ ویکیسن کی مقامی سطح پر تیاری کا کام شروع کرديا ہے

پاک ويک کا بنیادی فارمولا ہی صرف چین سے نہيں آیا بلکہ پاکستان ميں فارمولیشن اور پیکجنگ ميں بھی دوست ملک کے ماہرين نے پاکستانی ماہرین کا بھرپور ساتھ نبھايا۔

مزید پڑھیں:پاکستان کی پہلی کرونا ویکسین ’’پاک ویک‘‘ لانچ کردی گئی

ايگزيکٹو ڈائریکٹر اين آئی ايچ ميجر جنرل ڈاکٹر عامر اکرام نے بتایا کہ کسی بھی ویکسین کیلئے پاکستان کا فیز 3 کا یہ پہلا ٹرائل تھا اور وہ کینسینو بائیو کی یہ ہی ویکسین تھی۔ پاکستان میں اس ویکسین کا تقریبا ساڑھے 17ہزار سے زائد افراد پر ٹرائل کیا گیا۔

قومی ادارہ صحت میں شعبہ ویکسین کی سربراہ ڈاکٹر غزالہ نے بتایا کہ پاکستان کو کینسا ئینو ویکسین کا بڑا کنٹریکٹ دیا گیا ہے۔ قومی ادارہ صحت میں ایک لاکھ 18 ہزار پاک ویک ڈوز کی تیاری 1 ماہ میں مکمل ہوئی۔قومی ادارہ صحت میں پاک ویک کی روزانہ 1 لاکھ خوراکیں تیار ہو رہی ہیں اور اس میں مزید اضافہ بھی متوقع ہے۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے :

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube