پی پی کیخلاف بیانات پر شہبازشریف لیگی لیڈروں سے ناخوش

SAMAA | - Posted: May 27, 2021 | Last Updated: 2 months ago
Posted: May 27, 2021 | Last Updated: 2 months ago

Naeem Ashraf Butt Art Final

پاکستان مسلم لیگ نون کے صدر شہباز شریف نے مریم نواز اور شاہد خاقان عباسی کے پيپلزپارٹی مخالف بیانات پر ناپسندیدگی کا اظہار کرتے ہوئے پیپلز پارٹی کو شوکاز جاری کیے جانے کو بھی غیر ضروری قرار دیا ہے۔

نون لیگ کے ذرائع کا کہنا ہے کہ شہباز شریف نے اپنی قریبی رفقاء سے گفتگو کے دوران پیپلز پارٹی کے حوالے سے مریم نواز اور شاہد خاقان عباسی کے سخت موقف پر  ناراضگی کا اظہار کیا ہے۔

ذرائع نے بتایا کہ شہباز شريف پيپلزپارٹی کےساتھ تعلقات بہتر بنانے کی کوششوں ميں تھے کہ اسی دوران مریم نواز اور شاہد خاقان عباسی کے بیانات آڑے آگئے۔ اس پر مستزاد یہ کہ دونوں رہنماؤں نے پیپلز پارٹی پر پی ڈی ايم کی واپسی کے دروازے بند ہونے کی بات بھی کردی۔ اس مجموعی صورتحال کے باعث ليگی صدر کی مفاہمتی کوششوں پر منفی اثر پڑا جس پر انہوں نے اپنی خفگی کا اظہار کیا۔

ليگي ذرائع نے مزید بتایا کہ نون ليگ ميں شہبازشريف کے ہم خيال رہنماء يہ سمجھتےہيں کہ سينيٹ ميں يوسف رضا گيلاني کےاپوزيشن ليڈر بننے کے ليے بلوچستان عوامی پارٹی سے ووٹ لينے پر پی ڈی ایم کی جانب سے پیپلز پارٹی کو شوکاز جاری کردینے کی کوئی ضرورت نہیں تھی۔

نون لیگ کے ایک رہنما نے سماء کو بتايا کہ مفاہمت کے خواہشمند لیڈر یہ سوال اٹھا رہے ہیں کہ پيپلز پارٹی اسمبلی سےاستعفے دينے پرتيار نہيں تھی تو اسے کيوں مجبور کيا گيا۔ انہوں نے مزید بتایا کہ شہبازشريف اب بھی پيپلزپارٹی سے معاملات بہتر کرنے کے ليےکوشاں ہيں۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے :

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube