Tuesday, September 28, 2021  | 20 Safar, 1443

سندھ میں ڈاکوؤں کو سیاسی شخصیات کی سرپرستی حاصل ہے،گورنرسندھ

SAMAA | - Posted: May 25, 2021 | Last Updated: 4 months ago
Posted: May 25, 2021 | Last Updated: 4 months ago

گورنرسندھ عمران اسماعیل کا کہنا ہے کہ سندھ میں ڈاکوؤں کی بادشاہت قائم ہے جنہوں نے عوام کو یرغمال بنایا ہواہے اور انہیں بااثر شخصیات بشمول سیاستدانوں کی سرپرستی بھی حاصل ہے۔

عمران اسماعیل کا کہنا تھا کہ سندھ میں ڈاکوؤں کو کسی کا خوف نہیں ہے اور وہ ویڈیوز بناکر وائرل کررہے ہوتے ہیں۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ پولیس ڈاکوؤں سے مقابلہ کررہی ہے مگر اس کے پاس موجود ہتھیار ایسے مقابلوں کے لیے ناکافی ہیں۔

گورنرسندھ نے کہا کہ کچے کے علاقے میں ڈاکوؤں کے خلاف حالیہ آپریشن میں 9 افراد کی جانیں جا چکی ہیں اور ہم نے فیصلہ کیا ہے کہ شیخ رشید صاحب بدھ کراچی روانہ ہوں گے۔

ان کا کہنا تھا کہ اس حوالے سے کراچی میں ڈی جی رینجرز اور وزیراعلیٰ سندھ سے ملاقات کی جائے گی اور اگر ضرورت ہوئی تو رینجرز کو بھی آپریشن میں شامل کیا جائے گا۔

انہوں نے واضح کیا کہ اس فیصلے کا مقصد سیاسی نہیں بلکہ اس کا مقصد سندھ کے عوام کو تحفظ فراہم کرنا ہے اور شیخ رشید کیجانب سے صورتحال کو مد نظر رکھتے ہوئے فیصلے کیے جائیں گے۔

پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے رہنما تحریک انصاف فیصل واوڈا کا کہنا تھا کہ موجودہ حکومت میں کوئی بڑا اسکینڈل سامنے نہیں آیا اور اگر تحریک انصاف کے کسی فرد پر کوئی الزام آتا بھی ہے تو عمران خان اس کی انکوائری کرتے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ زلفی بخاری بیرون ملک نہیں جا رہے وہ خود کرسی سے ہٹے ہیں تاکہ شفاف احتساب ہو ورنہ آج تک تو کرسی پر بیٹھ کر ہی معاملات معاملات نمٹانے کا رواج تھا۔

فیصل واوڈا کا کہنا تھا کہ اگر جہانگیر ترین ترین مقدمات میں بری ہوگئے تو اپوزیشن کہے گی کہ حکومت ڈر گئی اور اگر سزا ہوئی تو اسے سیاسی انتقام قرار دے دیا جائے گا۔

فیصل واوڈا کا کہنا تھا کہ ن لیگ پاکستان کو اتفاق فاؤنڈری کی طرح چلانا چاہتی ہے اگروہ اور پیپلزپارٹی دونوں کی قیادت اس بات کا وعدہ کرے کہ وہ ڈالر 70 پر لے کر آجائیں گے اور روٹی کی قیمت 5 روپے کردیں گے تو حکومت کل ان کے حوالے کر دی جائے گی۔

بجٹ سے متعلق قیاس آرائیوں پر فیصل واوڈا کا کہنا تھا کہ بجٹ ہرصورت پاس ہوگا اور اگر پنجاب میں عثمان بزدار کے خلاف تحریک عدم اعتماد کامیاب ہوگئی تو ہم وفاقی حکومت کو خود گرا دیں گے۔

رہنما مسلم لیگ ن محسن شاہ نواز نے پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ سندھ میں بہت مسائل ہے اور یہ نہیں کہوں گا کہ وہاں سب ٹھیک ہے مگر پنجاب کی صورتحال زیادہ خراب ہے۔

محسن شاہ نواز نے کہا کہ پنجاب کے ہر محکمے میں دکانیں کھل گئی ہیں اور لوگ افسران کے ناموں پر پیسے بٹور رہے ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ رنگ روڈ اسکینڈل میں حکومت کے لوگ ملوث ہیں حکومتی ترجمان ہر کسی کو چور ڈاکو کہہ رہے تھے اب اپنے لوگوں کو بھی چور کہہ رہے ہیں۔

محسن شاہ نواز نے دعویٰ کیا کہ تحریک انصاف کے کئی وزراء حکومت سے ناراض ہیں تحریک انصاف کے ایم این ایز کہتے ہیں کہ جب ہم کمزوریوں کی نشاندہی کرتے ہیں تو عمران خان کو برا لگتا ہے۔

رہنما ن لیگ کا کہنا تھا کہ بجٹ میں پتہ چل جائے گا کہ حکومت کے پاس اکثریت ہے یا نہیں۔ انہوں نے دعویٰ کیا کہ 3 جون تک پنجاب میں تحریک عدم اعتماد آجائے گی۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube