Tuesday, September 28, 2021  | 20 Safar, 1443

پاکستان نے امریکا کو کوئی فضائی اڈہ نہیں دیا

SAMAA | - Posted: May 25, 2021 | Last Updated: 4 months ago
Posted: May 25, 2021 | Last Updated: 4 months ago

دفتر خارجہ کے ترجمان نے اس حوالے سے قیاس آرائیوں کو غیرذمے دارانہ قرا دیا— فائل فوٹو: رائٹرزترجمان دفتر خارجہ نے امریکا کو پاکستانی سرزمین کے استعمال کی اجازت دینے کے حوالے سے میڈیا میں زیر گردش خبروں کی تردید کرتے ہوئے کہا ہے کہ پاکستان نے امریکا کو کوئی فوجی یا فضائی اڈہ نہیں دیا ہے۔

دفتر خارجہ کے ترجمان زاہد حفیظ چوہدری نے کہا کہ ایسی کوئی تجویز بھی زیر غور نہیں ہے۔ اس حوالے سے جاری قیاس آرائیاں بے بنیاد اور غیر ذمے دارانہ ہیں اور ان سے گریز کیا جانا چاہیے۔

دفتر خارجہ کے ترجمان نے کہا کہ 2001 کے بعد سے پاکستان اور امریکا کے مابین فضائی مواصلات اور گراؤنڈ لائنز آف کمیونیکیشنز کے لیے تعاون کا فریم ورک طے ہے اور اس سلسلے میں کوئی نیا معاہدہ نہیں کیا گیا۔

واضح رہے کہامریکا کے امور اسسٹنٹ سیکریٹری برائے دفاع ڈیوڈ ایف ہیلوے نے امریکی سینیٹ کی آرمڈ سروسز کمیٹی کو گزشتہ ہفتے بتایا تھا کہ پاکستان نے افغانستان میں اہم کردار ادا کیا ہے، اس نے افغان امن عمل کی حمایت کی، افغانستان میں ہماری فوجی موجودگی برقرار رکھنے کے لیے اپنی فضائی حدود استعمال کرنے کی اجازت اور زمینی رسائی دی۔

ان کا کہنا تھا کہ افغانستان کے مستقبل کی حمایت اور اس حوالے سے کردار ادا کرنے کے ساتھ ساتھ امن کے قیام کے لیے ہم پاکستان سے اپنی بات چیت جاری رکھیں گے۔

گزشتہ ماہ امریکی صدر جو بائیڈن نے رواں سال 11 ستمبر تک افغانستان سے تمام امریکی اور نیٹو افواج کے انخلا کے منصوبے کا اعلان کیا تھا۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube