اسلاموفوبیا کےخاتمے کیلیےاجتماعی کاوشوں کی ضرورت ہے،عمران خان

SAMAA | - Posted: May 4, 2021 | Last Updated: 2 days ago
SAMAA |
Posted: May 4, 2021 | Last Updated: 2 days ago

وزیراعظم کی اوآئی سی ممالک کےسفیروں سےگفتگ

وزیراعظم عمران خان نے اسلامی تعاون تنظیم (او آئی سی) کے پلیٹ فارم سے خطاب کرتے ہوئے تمام مذاہب کے افراد کی دل آزاری روکنے کیلئے قانونی اقدامات پر زور دیا ہے۔

 منگل کو وزیراعظم عمران خان نے او آئی سی ممالک کے سفیروں گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ اظہار رائے کی آزادی کی آڑ میں توہین رسالتﷺ سے مسلمانوں کی دل آزاری ہوتی ہے، دہشت گردی اور انتہاپسندی کا کوئی مذہب نہیں ہوتا، شدت پسندوں کو اسلام کے ساتھ جوڑنے سےعالمی سطح پر مسلمان متاثر ہوتے ہیں۔

وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ اسلاموفوبیا سے بین المذاہب نفرت کو ہوا ملتی ہے، پاکستان اسی کو ختم کرنے کی کوشش کررہا ہے، اسلاموفوبیا کے خاتمے کیلئے اجتماعی کاوشوں کی ضرورت ہے۔

انہوں نے کہا کہ پاکستان دنیا میں برداشت کے فروغ کیلئےعالمی برادری سےتعاون کیلئے پرعزم ہے، او آئی سی اسلام کے صحیح تشخص اور امن کے پیغام کو اجاگر کرے اور اس حوالے سےعالمی سطح پر آگاہی پیدا کرنے میں کردار ادا کرے۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے :

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube