کوئٹہ خودکش دھماکا، ایک اور زخمی دم توڑ گیا

SAMAA | - Posted: Apr 22, 2021 | Last Updated: 3 weeks ago
SAMAA |
Posted: Apr 22, 2021 | Last Updated: 3 weeks ago

سرینا ہوٹل کوئٹہ میں خود کش بم دھماکے کا ایک اور زخمی دم توڑ گیا، جاں بحق افراد کی تعداد 5 ہوگئی۔

کوئٹہ کے علاقے زرغون روڈ پر تھری اسٹار سرینا ہوٹل کے پارکنگ ایریا میں گزشتہ روز خودکش دھماکا کیا گیا، واقعے کا مقدمہ کالعدم تحریک طالبان پاکستان کے ترجمان کیخلاف سی ٹی ڈی تھانے میں درج کرلیا گیا۔

ابتدائی تحقیقا ت کے بعد کاﺅنٹر ٹیررازم ڈیپارٹمنٹ کے ترجمان نے بتایا کہ دھماکا خودکش تھا، دھماکے کے وقت حملہ آور گاڑی میں موجود تھا، پولیس کے بم ڈسپوزل اسکواڈ کی رپورٹ کے مطابق خودکش حملہ آور کے اعضاء جلی ہوئی گاڑیوں کے نیچے سے مل گئے ہیں، جنہیں فارنزک کیلئے لیبارٹری بجھوادیا گیا۔

رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ دھماکے میں 80 سے 90 کلو گرام بارودی مواد استعمال کیا گیا، جس کے نتیجے میں دھماکے کے فوری بعد آگ بھڑک اٹھی، یہ دھماکا خیز مواد اس سے قبل بھی کوئٹہ کے کئی دھماکوں میں استعمال کیا گیا ہے۔

دھماکے کا مقدمہ سی ٹی ڈی اہلکار کی مدعیت میں سی ٹی ڈی تھانے میں کالعدم تحریک طالبان پاکستان کیخلاف درج کرلیا گیا، مقدمے میں قتل، اقدام قتل، انسداد دہشتگردی ایکٹ، دھماکا خیز مواد ایکٹ کی دفعات شامل کی گئیں ہیں۔

ادھر دھماکے میں زخمی ہونیوالا بینک کا سیکیورٹی گارڈ نصیب اللہ بھی سول اسپتال کے ٹراما سینٹر میں رات گئے دم توڑ گیا، جس کے بعد جاں بحق ہونے والوں کی تعداد 5 تک پہنچ گئی، جاں بحق افراد کی شناخت پولیس اہلکار شجاعت حسین عباسی، ہوٹل کے ڈیوٹی منیجر شاہ زیب یوسفزئی، ان کے دوست محکمہ وائلڈ لائف کے آفیسر ایمل خان کاسی، بینک کے 2 سیکیورٹی گارڈز اسد اللہ خروٹی اور نصیب اللہ نورزئی شامل ہیں۔

شاہ زیب یوسفزئی اور ان کے دوست ایمل خان کاسی کی تدفین کاسی قبرستان میں کی گئی، ایمل خان کاسی کی عیدالفطر کے بعد شادی طے تھی، پولیس اہلکار شجاعت حسین عباسی آزاد کشمیر کے علاقے مظفرآباد کا رہائشی تھا، ان کی میت آبائی علاقے منتقل کردی گئی۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے :

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube