کراچی:خاتون کی خودکشی،دھمکیاں دینے والے4افرادکیخلاف مقدمہ

SAMAA | - Posted: Apr 9, 2021 | Last Updated: 1 month ago
SAMAA |
Posted: Apr 9, 2021 | Last Updated: 1 month ago

Sukkur Police-1کراچی کے علاقے شادمان ٹاؤن میں خود کشی کرنے والی خاتون کے بھائی نے ہراساں کرنے اور دھمکیاں دینے والے 4 افراد کے خلاف مقدمہ دائر کردیا۔

پولیس کے مطابق متاثرہ خاتون کے بھائی کا کہنا تھا کہ ان کی بہن کو متعدد افراد کی جانب سے ہراساں کیا جا رہا تھا۔ مقدمہ شاہراہ نور جہاں تھانے میں درج کیا گیا۔ ایف آئی آر میں 4 افراد کو نامزد کیا گیا ہے۔ ایف آئی آر میں پبلک کالنگ آفس ( پی سی او) کے مالک عامر کا نام بھی دیا گیا ہے۔

درج ایف آئی آر کے مطابق مرحومہ کے بھائی نے بتایا کہ بہن کے موبائل فون سے 3 آڈیو میسجز بھی ملے، جس میں اس نے کچھ افراد کا نام لیا تھا جو اسے دھمکیاں دے رہے تھے۔

آڈیو میسج میں بہن کا کہنا تھا کہ وہ ان دھمکیوں کے خوف سے خود کشی کر رہی ہے۔

ایف آئی آر میں یہ بھی لکھا ہے کہ خاتون نے خود کشی سے قبل اپنی دوست کو آڈیو بیان بھیجا تھا۔ پولیس نے خود کشی کرنے والی خاتون کی آڈیو ریکارڈنگ حاصل کرلی۔

خاتون کے بیان کو ایف آئی آر کا حصہ بنا دیا گیا ہے۔ آڈیو بیان میں خاتون کا کہنا ہے کہ ان کے ساتھ جعلی نکاح کر کے ویڈیو بنائی گئی۔

یہاں یہ بات بھی قابل ذکر ہے کہ ایف آئی آر میں یہ بات واضح نہیں کی گئی ہے کہ جعلی نکاح کا واقعہ کیا تھا۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے :

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube