Thursday, August 5, 2021  | 25 Zilhaj, 1442

سندھ بھرمیں پہلی سے 8ویں جماعت تک اسکول بندکرنےکا فیصلہ

SAMAA | - Posted: Apr 4, 2021 | Last Updated: 4 months ago
SAMAA |
Posted: Apr 4, 2021 | Last Updated: 4 months ago

سعید غنی کا ٹویٹ

سندھ میں 6 اپریل بروز منگل سے صوبے بھر کے تمام سرکاری و نجی اسکولوں میں پہلی سے8 ویں جماعت تک کی کلاسز اسکول میں نہ لینے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔

وزیرتعلیم سندھ سعید غنی نے ٹویٹ کرتےہوئے بتایا کہ محکمہ تعلیم سندھ نے کرونا وائرس کی صورتحال کے پیش نظر صوبے بھر کے تمام سرکاری و نجی اسکولوں میں پہلی سے آٹھویں جماعت تک 6 اپریل بروز منگل سے اگلے 15 روز کیلئے فزیکل  کلاسز معطل کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔اس دوران بچوں کی تعلیم کو آن لائن، ہوم ورک اور دیگر ذرائع سے جاری رکھا جاسکتا ہے۔

پرائیوٹ اسکولز ایسوسی ایشنز کے چئیرمین حیدر علی نے سماء سے بات کرتےہوئے بتایا کہ تعلیمی اداروں کی بندش مستردکرتےہیں اورمکمل لاک ڈاؤن سے پہلے اسکولز بند نہیں کیے جائیںگے۔آن لائن کلاسز سے دنیا بھر میں مطلوبہ نتائج حاصل نہیں ہوئے اس لئےاسمارٹ لاک ڈاؤن کی پالیسی اختیارکی جائے حیدر علی نے بتایا کہ اسکول بندہونےسے10لاکھ بچےاسکول واپس نہیں آسکےہیں۔

 اس کےعلاوہ وفاقی وزیرتعلیم شفقت محمود کا کہنا ہے کہ ملک بھر میں تعلیمی اداروں کو کھلے رکھنے یا بند رکھنے کا مشترکا فیصلہ 6 اپریل بروز منگل کو کیا جائے گا۔

وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ نےبتایا ہے کہ صوبے میں 24گھنٹوں میں8797نمونوں کی جانچ کی گئی  اورکرونا وائرس کے مزيد240نئے کیسز رپورٹ ہے۔اس دوران کرونا وائرس سے صوبے میں کوئی اموات نہیں ہوئی۔ سندھ میں کرونا وائرس سے مجموعی اموات کی  تعداد4509ہے۔

سندھ میں مزید64مریض وائرس سے صحت یاب ہوگئے ہیں اورمجموعی تعداد256706ہوچکی ہے جبکہ 266مریضوں کی حالت تشویشناک اور31مریض وینٹی لیٹرزپرہیں۔ صوبے کے240نئے کیسز میں سے98 کا تعلق کراچی سے ہے۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے :

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube