لاہور: قذافی اسٹیڈیم میں قائم 2 ریسٹورنٹس سیل

SAMAA | - Posted: Apr 1, 2021 | Last Updated: 3 months ago
Posted: Apr 1, 2021 | Last Updated: 3 months ago

فائل فوٹو

لاہور میں کرونا وائرس سے متعلق نافذ العمل ایس او پیز کی خلاف ورزی پر 2 ریسٹورنٹس کو سیل کردیا گیا ہے۔

متعلقہ ریسٹورنٹس کو قذافی اسٹیڈیم کی حدود میں سیل کیا گیا، جب کہ ایس او پیز کی خلاف ورزی کرنے پر کمشنر لاہور نے ایف آئی آر بھی درج کرنے کا حکم دے دیا، جبکہ کمشنر لاہور کے حکم پر 2 فارم ہاؤسز کو بھی سیل کردیا گیا ہے۔ کمشنر لاہور کا کہنا تھا کہ انسانی جانوں کے تحفظ کے لیے تمام وسائل بروئے کار لائیں گے۔

دوسری جانب لاہور میں بغیر ماسک موٹر سائیکل، گاڑیوں اور پبلک ٹرانسپورٹ کے چالان بھی کیے گئے ہیں۔ سٹی ٹریفک پولیس کا کہنا ہے کہ 2 روز میں کرونا ایس او پیز کی خلاف ورزی پر 19 ہزار 499 چالان کئے گئے۔ پبلک ٹرانسپورٹ میں کرونا ایس او پیز کی خلاف ورزی پر 11 مقدمات درج ہوئے۔

حکام کا کہنا ہے کہ 50 فیصد سے زائد سواریاں بٹھانے اور کرونا ایس او پیز کی خلاف ورزی پر 177 گاڑیاں بند کی گئی ہیں۔ 13417 موٹرسائیکلوں، 2620 رکشوں ، 1214 کاروں کو چالان ٹکٹ جاری کیا گیا۔ سی ٹی او حامد عابد کے مطابق موٹر سائیکل پر ايک سواری ہونے کی صورت میں چالان نہیں ہوگا، جب کہ گاڑی میں بغیر ماسک ایک فرد کا چالان بھی نہیں ہوگا۔

سید حماد عابد کا مزید کہنا تھا کہ چالان کا مقصد شہریوں کی جانوں کے تحفظ کو یقینی بنانا ہے۔ پبلک سروس وہیکلز میں 50 فیصد سواریوں کی اجازت ہے۔ کارروائی کیلئے ٹریفک پولیس کی ٹیمیں تشکیل دے دی ہیں۔

شپر میں ایس او پیز پر عمل درآمد کیلئے لاہور پولیس، ضلعی حکومت اور محکمہ ہیلتھ کی مشترکہ ٹیمیں بھی تشکیل دے دی گئیں ہیں۔ شہر میں بغیر ماسک 407 مقدمات، جب کہ کرونا ایس او پیز کی خلاف ورزی پر 438 مقدمات درج کیے گئے۔ کرونا ایس او پیز کی خلاف ورزی 438 جب کہ مجموعی طور پر 845 مقدمات درج کئے گئے۔

کیپٹل پولیس کی جانب سے جاری اعداد و شمار کے مطابق ماڈل ٹاؤن ڈویژن میں بغیر ماسک 134 ، جب کہ ایس او پیز کی خلاف ورزی پر 234 مقدمات درج ہوئے۔ اقبال ٹاؤن میں بغیر ماسک 60 ، جب کہ کرونا ایس او پیز کی خلاف ورزی پر 43 مقدمات درج کئے۔ سول لائنز ڈویژن میں بغیر ماسک 43 ، جب کہ کرونا ایس او پیز کی خلاف ورزی پر 39 مقدمات، کینٹ ڈویژن میں بغیر ماسک 80 جب کہ کرونا ایس او پیز کی خلاف ورزی پر 27 مقدمات، سٹی ڈویژن میں بغیر ماسک 56 جب کہ کرونا ایس او پیز کی خلاف ورزی پر 89 مقدمات اور صدر ڈویژن میں بغیر ماسک 07 اور کرونا ایس او پیز کی خلاف ورزی پر 84 مقدمات درج کئے گئے۔

یہاں یہ بات بھی قابل ذکر ہے کہ لاہور میں دوران ڈارئیونگ ماسک پہننا لازمی قرار دے دیا گیا ہے اور اس کی خلاف ورزی پر جرمانے عائد کیے جا رہے ہیں۔ پنجاب حکومت کی جانب سے سختی سے ہدایت کی گئی ہے کہ شہری ڈرائيونگ کرتے وقت ماسک پہننا ہرگز نہ بھوليں، بصورت دیگر چالان کیلئے تیار رہیں۔

واضح رہے کہ کرونا ویکسی نیشن سے متعلق وزیر صحت پنجاب ڈاکٹر یاسمین راشد نے اپنے ایک ٹویٹر پیغام میں واضح کہا ہے کہ بزرگ شہریوں کی سہولت کیلئے تمام ویکسینیشن سینٹرز ہفتے کے ساتوں روز کھلے رہیں گے۔Pakistan is understating coronavirus infections & deaths, top official says

اسمین راشد کا اپنے ٹویٹ میں کہنا ہے کہ 10 مارچ کو کرونا ویکسین لگوانے والے بزرگ شہریوں کو یکم اپریل کو دوبارہ ویکسین لگائی جائے، معمر افراد انہی سینٹرز پر جائیں جہاں انہیں پہلی ڈوز دی گئی تھی۔

کرونا وائرس کی دوسری خوراک 21 دن بعد لگنی چاہئے۔ اس کا اطلاق سائنوفارم ویکسین پر ہوتا جو 10 مارچ سے دی جارہی ہے۔

صوبائی وزیر صحت کا مزید کہنا ہے کہ جن لوگوں نے پہلی ویکسین لگوالی انہیں 22 ویں دن دوسری ڈوز لگوانی چاہئے، چاہے انہیں یاددہانی کا پیغام موصول ہو یا نہ ہو۔ رپورٹ کے مطابق پنجاب بھر میں روزانہ 60 سال سے زائد عمر کے 20 ہزار سے زائد افراد کو کرونا وائرس سے بچاؤ کی ویکسین دی جارہی ہے۔

اتوار کو وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ کرونا وائرس کے پھیلاؤ کے باوجود ہم ملک میں مکمل لاک ڈاؤن نہیں کرسکتے۔ کرونا تیزی سے پھیلا تو ہمارے اسپتال دوبارہ بھرجائیں گے ۔ اس لئے عوام احتیاط کریں اورکرونا کو پھیلنے سے روکیں۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے :

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube