ایبٹ آباد:تیندوا گاؤں والوں کے ہاتھوں ہلاک،بزرگ زخمی

SAMAA | - Posted: Mar 30, 2021 | Last Updated: 1 month ago
SAMAA |
Posted: Mar 30, 2021 | Last Updated: 1 month ago

رہائشیوں نے اپنے دفاع میں تیندوا مارا،افسر جنگلی حیات

ايبٹ آباد میں ایک مرتبہ پھر تیندوے اور انسانوں کا آمنا سامنا ہوا جس کے دوران ایک عمر رسیدہ شخص زخمی اور گاؤں میں داخل ہونے والا تیندوا اپنی جان سے ہاتھ دھوبیٹھا۔

ایبٹ آباد کی یونین کونسل پلک کے گاؤں ملکوٹ کے رہائشیوں کے مطابق منگل کو ایک تیندوا ان کے گاؤں میں گھس آیا جس نے حملہ کرکے ایک 65 سالہ رحیم داد کو زخمی کردیا۔ زخمی شخص کے شور مچانے پر مقامی افراد وہاں پہنچ گئے جنہوں نے لاٹھیوں اور پتھروں سے تیندوے پر حملہ کردیا جس سے وہ ہلاک ہوگیا۔

بعد ازاں گاؤں کے مکینوں نے زخمی شخص کو اسپتال منتقل کرتے ہوئے محکمہ جنگلی حیات کو اس واقع سے مطلع کردیا۔

گلیات میں تیندووں کی بہتات، انسانوں سے ٹکراؤ بڑھ گیا

سماء ڈیجیٹل سے گفتگو کرتے ہوئے ایبٹ آباد کے محکمہ جنگلی حیات کے سب ڈویژنل فاریسٹ افسر سردار محمد نواز نے خیال ظاہر کیا کہ اس تیندوے نے حال ہی میں اپنی کچھار چھوڑی ہوگی اور کسی دوسرے علاقے کی تلاش میں ہوگا۔ ان کا کہنا تھا کہ بہت امکان ہے کہ تیندوا مری سے متصل جنگل کی جانب سے آیا ہو کیوں کہ خیبرپختونخوا کا جنگل وہاں سے دور ہے۔

سردار نواز کا کہنا تھا کہ گاؤں والوں کے خلاف کوئی قانونی کارروائی نہیں کی جائے گی کیوں کہ قانون کی رو سے اپنے دفاع میں کسی تیندوے کو ہلاک کیا جاسکتا ہے۔

کیا سکھر کے گاؤں میں چیتا گھس آیا تھا؟

اس قسم کی صورتحال پر تبصرہ کرتے ہوئے سندھ وائلڈ لائف افسر اعجاز نے کہا اگر کوئی جنگلی جانور کسی انسانی بستی میں داخل ہوجائے تو لوگوں کو چاہیے کہ وہ شور مچائیں یا بلند آواز میں بولنا شروع کردیں، تالیاں یا کوئی دھاتی شئے بجاکر آواز پیدا کریں اور جانور کو واپس نکلنے کا راستہ دیں۔

ان کا کہنا تھا کہ مذکورہ تدابیر اختیار کرنے کے بعد علاقہ مکینوں کو چاہیے کہ وہ محکمہ جنگلی حیات کو مطلع کردیں۔ انہوں نے خبردار کیا کہ اگر لوگ ایسے جانور کے گرد جمع ہوجائیں گے تو پھر وہ گھبراکر اپنے بچاؤ کے لیے حملہ کرسکتا ہے۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے :

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube